A PHP Error was encountered

Severity: Notice

Message: Undefined offset: 0

Filename: frontend_ver3/Sanitization.php

Line Number: 1246

Error

A PHP Error was encountered

Severity: Notice

Message: Undefined offset: 2

Filename: frontend_ver3/Sanitization.php

Line Number: 1246

ن لیگ میں فارورڈ بلاک بن گیا یالوگ خریدے گئے ہیں؟

ن لیگ میں فارورڈ بلاک بن گیا یالوگ خریدے گئے ہیں؟

Aug 16, 2018 | 18:09:PM

شاہد نذیر چودھری

پنجاب اسمبلی میں ایک بار پھر فارورڈ بلاک کی گونج سنائی دینے لگی ہے ۔سیاسی پنڈتوں کا کہنا ہے کہ پنجاب اسمبلی سے فارورڈ بلاک کی تان قومی اسمبلی تک جاکر ٹوٹے گی ۔ میرا ذاتی خیال ہے کہ پنجاب اسمبلی کا یہ دس کا ٹولہ فارورڈ بلاک نہیں ہوسکتا ،امکان ہے کہ انہوں نے مہنگی سیاست کا دام وصول کیا ہوگا ۔ ن لیگ والے اسکو بدترین ہارس ٹریڈنگ کہہ رہے ہیں اور سیاست کے اس طرز عمل کو غیر جمہوری ہتھکنڈہ قرار دے دیکر پی ٹی آئی کو مطعون قرار دے رہے ہیں۔یہ کہنا ان کا جمہوری حق بنتا ہے کہ وہ ن لیگ کے امیدواروں کے خریداروں کو لعنت ملامت کریں لیکن انہیں یہ بھی یاد رکھنا چاہئے کہ ق لیگ کے ساتھ ن لیگ نے کون سا قابل تعریف کام کیا تھا؟؟؟ ۔ق لیگ کو ٹکڑے کرنے اور پنجاب میں دفن کرنے کے لئے ن لیگ نے میاں عطا مانیکا کی مدد سے پنجاب اسمبلی میں فارورڈ بلاک بنوایا تھا ۔اس دعوے کے ساتھ کہ ان کے ساتھ پچاس فیصد ممبران شامل ہیں ،وہ جاتی عمرہ گئے اور میاں شہباز شریف کو پیپلز پارٹی اور ق لیگ کے عتاب سے بچائے رکھنے میں بنیادی کردارا دا کیا تھا ۔لہذا آج ق لیگ دس سیٹوں کے ساتھ پنجاب اسمبلی میں سپیکر کی سیٹ حاصل کرچکی ہے تو اس کو ن لیگ کے ساتھ زیادتی سے منسوب کرنا قرین سیاست نہیں ۔یہ سیاسی انتقام یا سیاسی ہتھ کنڈہ جو ن لیگ نے ایک زمانے میں روشناس کرایا تھا ، اب ق لیگ پی ٹی آئی کی مدد سے اسکو بام عروج تک پہنچانے کی کوشش کرے گی ۔

خیر پاکستان کی پارلیمانی سیاست میں فارورڈ بلاک بننا بھی سیاست کا حسن قرار دیا جاتاہے ۔ایسی جماعت جو اپنے اراکین کے جمہوری حق کو تسلیم نہیں کرتی اس میں فارورڈ بلاک بننا اچنبھے کی بات نہیں رہی ۔آئین اس کی مخالفت بھی نہیں کرتا نہ فارورڈ بلاک بنانے والوں کو سزا دیتا ہے تاہم جس جماعت میں بھی فارورڈ بلاک بن جائے اسکی جہاں بے عزتی ہوتی ہے وہاں اس جماعت کی ساکھ داو پر لگ جاتی ہے ۔مسلم لیگ ن کو اسکا ”کریڈٹ“ جاتا ہے کہ جمہوریت کی داعی اس بڑی جماعت کے خون میں فارورڈ بلاک،ہارس ٹریڈنگ کی سیاست ہمیشہ سے موجود رہی ہے ،ماضی میں اس نے جو جو الیکٹیبلز خریدے اب پارلیمانی منڈی کے بیوپاریوں نے ان سے بہتر ان کا ریٹ لگا کر سودا چُک لیا ہے۔

پنجاب اسمبلی کے سپیکر چودھری پرویز الٰہی کے غیر معمولی ووٹ(دو سو ایک ) لینے پر اعلان کردیا گیا ہے کہ ن لیگ میں فارورڈ بلاک بن گیا کیونکہ جن دس لیگیوں نے انہیں ووٹ دیا ہے ،انہیں فارورڈ بلاک کا ہی شاخسانہ قراردیا جارہا ہے ۔فی الحال تو یہ دس لوگ سامنے نہیں آئے کیونکہ ووٹنگ میں بیلٹ پیپر استعمال ہوتا ہے اس لئے کسی ایک باغی رکن کی شناخت کرنا آسان کام نہیں تاہم یہ بات تو طے ہوچکی ہے کہ ن لیگ کے قلعے میں چودھریوں نے نقب لگا کر دکھا دی ہے ۔انہوں نے آج ن لیگ کے دس رکن توڑ کر انکی ہمدردیاں اپنے ساتھ منسوب کرلی ہیں تو فی الحال انہیں منظر عام پر بھی نہیں آنے دیا گیا ۔ یہ فارورڈ بلاک کی ایسی شکل ہے جو حقیت میں فارورڈ بلاک سے زیادہ مک مکا کا خوفناک روپ بھی ہوسکتا ہے ۔اسکو ڈالر کی چمک بھی قرار دیا جاسکتا ہے ،چودھری سرور کے سینیٹر بننے کی دوڑ میں بھی پنجاب اسمبلی سے ن لیگ کے کئی ارکان کے ووٹ انہیں مل گئے تھے ۔اس سے اس بات کو شبہ ملتا ہے کہ ن لیگ میں بنیادی طور پر کوئی فارورڈ بلاک نہیں ہے بلکہ یہ نظریہ ضرورت کے تحت بکے ہوئے لوگ ہیں جو پارٹی کی پیٹھ میں چھرا گھونپ دینے میں کوئی تردد نہیں کرتے اور بوقت ضرورت بک جاتے ہیں۔سوچنے کی بات ہے کہ اگر ن لیگ میں حقیقت میں فارورڈ بلاک ہوتا تو وہ بھی عطا مانیکا کی طرح منظر عام پر آکر اس بات کا اعلان کرتا کہ ہاں ہم باغی ہیں ۔ چُپ چپیتے مخالف نامزد امیدوار کوووٹ دینا فارورڈ بلاک بننے کی نشانی نہیں ہوسکتی ۔

۔۔

نوٹ:  روزنامہ پاکستان میں شائع ہونے والے بلاگز لکھاری کا ذاتی نقطہ نظر ہیں۔ادارے کا متفق ہونا ضروری نہیں۔ 

مزیدخبریں