بلدیہ کورنگی نے 2لاکھ9سے زائد  آلائشوں کو اٹھا کر ٹھکانے لگا دیا

بلدیہ کورنگی نے 2لاکھ9سے زائد  آلائشوں کو اٹھا کر ٹھکانے لگا دیا

کراچی (اسٹاف رپورٹر) چیئرمین بلدیہ کورنگی سید نیئر رضا نے کہا ہے کہ بلدیہ کورنگی 37یوسیز پر مشتمل بڑا ضلع ہے جس میں مختلف نوعیت کی آبادیاں ہیں جہاں ایسی صورتحال ہو وہاں کام کرنا اتنا آسان نہیں جتنا سمجھ لیا جاتا ہے لیکن پھر بھی بلدیہ کورنگی نے بھر پور کوشش کی ہے کہ عوام کو ریلیف دیا جائے۔ایک تو عید الاضحی سے پہلے طوفانی بارشوں کا سلسلہ جاری تھا جو خندقیں آلائشیں دفن کرنے کے لئے بنائی گئی تھیں ان میں پانی بھر گیا تھا اس سلسلے میں شرافی گوٹھ میں واقع ڈمپنگ گراؤنڈ میں آلائشیں مدفن کرنے کی اجازت بھی مانگی گئی لیکن سالڈ ویسٹ منیجمنٹ والوں نے اس سلسلے میں کوئی تعاون نہیں کیا جس کی وجہ سے ازسر نو خندقوں کی کھدائی کر کے نئی خندقیں کھودی گئی۔چیئرمین بلدیہ کورنگی سید نیئر رضا نے مزید بتایا کہ بلدیہ کورنگی میں 16کلیکشن پوائنٹس بنائے گئے تھے جہاں پر آلائشوں کو اٹھا کر اندرونی علاقوں،گلی،محلوں سے سوزوکیوں،شہزور ٹرکوں کے زریعے یونین کونسلرز کے مختلف وارڈسے لایا جا رہا تھا اس کے بعد بڑے ڈمپرز اور لوڈرز کی مدد سے آلائشوں کو خندقوں میں ڈالنے کے لئے لے جایا جارہا تھا کام کو آسان بنانے کے لئے افسران پر مشتمل خصوصی مانیٹرنگ ٹیمیں تمام زونز میں تشکیل دی گئی تھی جو ہر زونز میں صبح سے رات گئے تک ہر گلی،ہر محلے،ہر اندرونی علاقے تک کو مانیٹر کر رہی تھی اور جہاں سے کوئی شکایت ملتی تھی وہاں فوری کاروائی کر کے آلائش اٹھوالی جاتی تھی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر