17 اگست کو نیب میں آصف زرداری کی پیشی،پیپلز پارٹی نے کارکنوں کو حیران کن ہدایت کر دی

17 اگست کو نیب میں آصف زرداری کی پیشی،پیپلز پارٹی نے کارکنوں کو حیران کن ہدایت ...
17 اگست کو نیب میں آصف زرداری کی پیشی،پیپلز پارٹی نے کارکنوں کو حیران کن ہدایت کر دی

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان پیپلز پارٹی کے سینئر رہنماء میاں رضا ربانی نےکہاہےکہ سپریم کورٹ کی آبزرویشنز اور فیصلے نے نیب کو زیرو کردیا ہے،آصف زرداری کو نیب نے بلاوجہ طلب کیا،سابق صدر کی ہدایت پر کارکنان 17اگست کو ان سے اظہارِ یکجہتی کے لیئے نیب آفس کے سامنے جمع نہیں ہوں گے،صدر آصف زرداری نے کہا ہے کہ وہ ماضی میں بھی نیب مقدمات کا سامنا اکیلے ہی کرتے رہے ہیں،اب بھی کریں گے، دہشتگردی کے متعلق قانون  فقط کالا قانون نہیں بلکہ "شاہ کالا قانون" ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کی سینٹرل ایگزیکیوٹو کمیٹی کے اجلاس کے بعدمیڈیا کو بریفنگ دیتے ہوئے میاں رضا ربانی نے کہا کہ اجلاس 6 نکاتی ایجنڈا پر غور کیا گیا اور پارٹی رہنماؤں نے ہمیشہ کی طرح کر اظہار خیال کیا،ہم واضح کہنا چاہتے ہیں کہ وفاق کایہ خواب پورا نہیں ہوگا کہ کراچی کا  ریونیو اسلام آباد استعمال کرسکے کیونکہ کراچی سندھ کا حصہ ہےاور ہمیشہ رہے گا۔انہوں نے کہا کہ اجلاس میں نیب کا  معاملہ بھی زیر بحث آیا ،نیب کا کردار سب کے سامنے ہے،پیٹریاٹ بنانے میں نیب کا کردار ڈھکا چھپا نہیں،پیپلز پارٹی کو بہت اچھی طرح معلوم ہے کہ نیب کو کس  طرح استعمال کیا جاتا ہے؟ ہیومن رائٹس واچ کی جانب سے جاری کردہ  حالیہ پورٹ میں جس طرح بے نقاب کیا گیا جبکہ سپریم کورٹ کی آبزرویشنز اور فیصلے نے نیب کو زیرو کردیا ہے۔انہوں نے کہا کہ صدر زرداری کو اس وقت نیب کی جانب سے طلب کرنی کی ضرورت نہیں تھی،وہ ماضی میں پیش ہوتے رہے ہیں اور اگر ضروری ہوا تو پھر پیش ہوں گے،پیپلز پارٹی اور اس کی ذیلی تنظیمیں چاہتی ہیں کہ پارٹی کارکنان نیب آفس کے آگے پیش ہوں لیکن صدر آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ کارکنان وہاں جمع نہ ہوں،صدر آصف زرداری نے کہا ہے کہ وہ ماضی میں بھی نیب مقدمات کاسامنا اکیلے ہی کرتے رہے ہیں اوراب بھی کریں گے۔

مزید :

قومی -