تھانہ نواں شہر: پولیس متحرک‘ ملزموں کو بے گناہ کرنے کی منصوبہ بندی فائنل

  تھانہ نواں شہر: پولیس متحرک‘ ملزموں کو بے گناہ کرنے کی منصوبہ بندی فائنل

  

کبیروالا(نامہ نگار) پولیس تھانہ نواں شہر اور چوری کے ملزمان کا مبینہ ”باہمی گٹھ جوڑ“ کے باعث چوری کی واردات میں لوٹے گئے 11لاکھ  روپے اور اڑھائی تولہ طلائی زیورات ”اڑن چھو“کرنے کیلئے نامزد ملزمان کو ”بے (بقیہ نمبر45صفحہ7پر)

گناہ“ کرنے کی منصوبہ بندی کرلی گئی،نامزد ملزمان نے ”مدعی پارٹی“ کے خلاف گھر پر دھاوا بولنے،50ہزار روپے اور 2تولے طلائی زیورات لوٹنے کا مقدمہ درج کرانے کیلئے عدالت میں رٹ پٹیشن دائر کردی۔تفصیل کے مطابق پولیس تھانہ نواں شہر میں درج مقدمہ نمبری 339/20کے مدعی ماہلا خان نے اپنے جانور اور درخت بیچ کر11لاکھ روپے جمع کئے۔13اور 14جولائی  2020 ء کی درمیانی شب اسکے حقیقی بھائی ہوت،حقیقی بیٹے ساجد،ملزم عابد اور ایک نامعلوم نے چوری کی واردات میں 13لاکھ روپے اور اڑھائی تولے طلائی زیورات چرا لیا۔پولیس تھانہ نواں شہر نے حقائق کی روشنی میں ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا اور ملزم ہوت کے گھر سے چوری شدہ رقم سے خریدی گئی ایک گائے،موٹر سائیکل اور ٹی وی سے برآمد کرلئے اور چوری کی مذکورہ واردات میں ملوث مدعی کے ملزم بیٹے کے خلاف چالان پیش کرکے اسے جوڈیشل کرادیا جبکہ پولیس اور دیگر نامزد ملزمان نے مبینہ طور پر سازباز ہوکر مسروقہ 11لاکھ روپے اور اڑھائی تولہ طلائی زیورات کو ہضم کرنے کے لئے نامز د اور نامعلوم ملزمان کو بے گناہ قرار دینے منصوبہ بندی کرلی گئی ہے۔مدعی مقدمہ ماہلا خان نے اپنے بیٹے عمر حیات کے ہمراہ میڈیا کو بتایا ہے کہ ملزمان نے پولیس تھانہ نواں شہر کے ساتھ مبینہ طور پر ساز باز ہوکر اُلٹا ان کے خلاف گھر پر دھاوا بولنے،50ہزار نقدی اور دوتولے طلائی زیورات اٹھانے کا مقدمہ درج کرانے کیلئے عدالت میں رٹ پٹیشن دائر کردی ہے۔مدعی مقدمہ نے آر پی او ملتان سمیت دیگر حکام بالا سے صورت حال کا نوٹس لینے اور انصاف فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

فائنل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -