یوم آزادی کے موقع پر اسلام آباد میں دو غیر ملکی خواتین کو ہراساں کیے جانے کا انکشاف، ویڈیو بھی سامنے آگئی

یوم آزادی کے موقع پر اسلام آباد میں دو غیر ملکی خواتین کو ہراساں کیے جانے کا ...
یوم آزادی کے موقع پر اسلام آباد میں دو غیر ملکی خواتین کو ہراساں کیے جانے کا انکشاف، ویڈیو بھی سامنے آگئی
سورس: Screengrab

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ سال یوم آزادی پر ایک لڑکی کو ہراساں کرنے کا شرمناک واقعہ پیش آیا تھا اور اس سال اسلام آباد میں شکرپڑیاں کے مقام پر دو غیرملکی سیاح لڑکیوں کو اوباشوں کے ایک ہجوم کی طرف سے ہراساں کیے جانے کا واقعہ پیش آیا۔ منظرعام پر آنے والی ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ تین غیرملکی سیاح، جن میں دو لڑکیاں ہوتی ہیں، کو اوباش نوجوانوں نے گھیر رکھا ہوتا ہے۔

ان میں سے ہر نوجوان غیرملکی خواتین کے ساتھ ویڈیو بنانے کی کوشش کر رہا ہوتا ہے۔ غیرملکی لڑکیوں کے ساتھ بدسلوکی کی یہ ویڈیو 14اور 15اگست کی درمیانی رات ٹک ٹاک پر پوسٹ کی گئی۔ ویڈیو میں دونوں لڑکیاں انتہائی پریشانی اور خوف کے عالم میں نظر آ رہی ہوتی ہیں۔ 

ویڈیو میں یہ بھی دیکھا جا سکتا ہے کہ جہاں کئی اوباش لڑکیوں کو ہراساں کر رہے ہوتے ہیں، وہیں کچھ لوگ ان اوباشوں کو روکنے اور لڑکیوں سے دور رکھنے کی کوشش بھی کر رہے ہوتے ہیں۔ ٹک ٹاک پر اس واقعے کی ویڈیوز وائرل ہونے کے بعد اسلام آباد پولیس نے نوٹس لیتے ہوئے تحقیقات شروع کر دی ہیں۔

اسلام آباد پولیس کا کہنا ہے کہ اس واقعے کا مقدمہ درج کر لیا گیا ہے اور ملزمان کی شناخت کے لیے ویڈیو نادرا کو بھجوائی جا رہی ہے۔ اس کیس کی ڈی آئی جی آپریشنز سہیل ظفر چٹھہ خود نگرانی کریں گے۔ 

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -