ملک کو مزاحمتی نہیں مفاہمتی سیاست کی ضرورت ہے،علامہ راغب نعیمی

ملک کو مزاحمتی نہیں مفاہمتی سیاست کی ضرورت ہے،علامہ راغب نعیمی

لاہور (سٹاف رپورٹر)لاہور شہر میں تحریک انصاف کی احتجاجی کال کے نتیجہ میں تین قیمتی جانوں کے ضیاع پر جتنا بھی افسوس کیا جائے کم ہے اس وقت ملک کو مزاحمتی نہیں بلکہ مفاہمتی سیاست کی ضرورت ہے، حکومت اور تحریک انصاف ضد اور ہٹ دھرمی کی سیاست چھوڑ کربا مقصد اور ثمر آور مذاکرات کر یں ،مذاکرات کا ڈھونگ مت ر چائیں، قوم کئی ماہ سے بے یقینی کی کیفیت میں مبتلا ہے۔ فریقین اپنے رویوں میںلچک پیدا کریں ۔ڈائیلاگ ہی واحد راستہ ہیں جو تمام مسائل کا حل ہیں اگر مذاکرات کو سنجیدگی سے نہیں لیا گیا تو دونوں رہنماﺅں کے ہاتھ خسارے کے سوا کچھ نہیں آئے گا آج سیاستدانوں نے جس طرح کے رویے اپنا رکھے ہیں ملک ان رویوں کا متحمل نہیں ہوسکتا۔ اگرسیاستدان ہی آپس میں لڑتے رہے تو عوام کو ایک پلیٹ فارم پر کون اکٹھا کرے گایہ بات ناظم اعلیٰ جامعہ نعیمیہ علامہ محمد راغب حسین نعیمی نے تحریک انصاف کی جانب سے لاہور میں احتجاج کے موقع پر اپنے بیان میں کہی انہوں نے کہا کہ اس وقت ہمارا ملک جن بحرانوں سے گزر رہا ہے ہمیں قومی یکجہتی کی اشد ضرورت ہے جب تک با مقصد مذ اکرات نہیں ہو ں گئے ملک ترقی کے راستے پر نہیں چل سکتاکیونکہ اتحاد و یگانگت ہی پرامن معاشرے کی اساس ہوتے ہیں اگر اتحاد اور وحدت پارہ پارہ ہو جائے تو تاریخ بھی ایسی قوموں کو فراموش کردیتی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ملک و قوم کو جتنی اتحاد و یکجہتی کی ضرورت آج ہے پہلے کبھی نہ تھی۔پیراحمد فضیل خان نقشبندی سجادہ نشین آستانہ نقشبندیہ نے کہاہے کہ جب تک ہم لوگ آپس میں بھائی چارے کی فضا قائم نہیں کریں گے، اپنی مذہبی، قومی اور اخلاقی ذمہ داری کا احساس نہیں کریں گے،

علامہ راغب نعیمی

مزید : صفحہ آخر