مارکیٹنگ کمپنیوں نے ایل پی جی کی قیمت میں5روپے فی کلو اضافہ کر دیا

مارکیٹنگ کمپنیوں نے ایل پی جی کی قیمت میں5روپے فی کلو اضافہ کر دیا

لاہور(خبرنگار) ایل پی جی مارکیٹنگ کمپنیوں نے ایل پی جی کی قیمت میں5روپے فی کلو اضافہ کر دیا ہے جس کے بعد گھریلو سلنڈر کی قیمت 60 روپے بڑھ گئی ہے اور کمرشل سلنڈر کی قیمت میں 240 روپے بلاجواز اضافہ کر دیا گیا ہے۔ ایل پی جی مارکیٹنگ کمپنیوں نے تین روز میں بلاجواز ایل پی جی کی قیمتوں میں 25روپے فی کلو اضافہ کر دیا ہے ، جبکہ حکومت نے گیس کی قیمت میں کسی بھی قسم کا اضافہ نہیں کیا ہے۔ مارکیٹنگ کمپنیوں نے سردی کی شدت بڑھنے سے قیمتوں میں ناجائز منافو خوری کا کالا دھندا شروع کر دیا ہے۔ابھی ہمارے لوکل ایل پی جی پیداواری اداروں کی قیمت 7000روپے فی ٹن کمی کے بعد 60000ہزار روپے فی میٹرک ٹن ہوگئی ہے۔ بین القوامی منڈی میں ایل پی جی کی قیمت 563ڈالر فی میٹرک ٹن ہے اور پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار گزشتہ3ماہ سے لوکل انٹرنیشنل مارکیٹ کی قیمت لوکل مارکیٹ سے بھی کم ہے۔ جس پر صارفین نے شدید احتجاج کیا ہے ، جبکہ ایل پی جی ڈسٹری بیوٹرز ایسو سی ایشن کے چےئرمین عرفان کھوکھر نے کہا ہے کہ ایل پی جی کی قیمتوں میں ناجائز اضافہ غریبوں کے ساتھ ظلم کی انتہا ہے۔ مارکیٹنگ کمپنیوں کی جارہ داری اور بلیک مارکیٹنگ پر اوگرا کیوں خاموش بیٹھا ہے۔ غریب صارفین مہنگی گیس لینے پر مجبور ہیں ۔ آئندہ دنوں میں گیس اتنی مہنگی ہو جائیگی کہ غریب صارفین کو مجبورا اپنے گھروں کے چولہے بند کرنے پڑیں گے ۔ حکومت مہنگی گیس بیچنے والی کمپنیوں کو خلاف ایکشن کیوں نہیں لے رہی۔ اوگرا قانوں کے مطابق ایل پی جی کی قیمت95روپے فی کلوہونی چاہیے لیکن فروخت دوگنی قیمت پر ہورہی ہے ۔ کراچی 120روپے فی کلو، گھریلو سلنڈر1390روپے ہے ، جس کے بعد لاہور گوجرانوالہ ، گجرات ، فیصل آباد، سیالکوٹ، حید۔رآباد، سکھر میں ایل پی جی 140روپے فی کلو، 1630روپے گھریلو سلنڈر ہو گیا ہے ۔ اور کراچی میں 120 روپے فی کلو اور گھریلو سلنڈر 1390 روپے ہو گئی ہے جبکہ میر پور، کراچی، ملتان، بہاولپور، ڈیرہ غازی خان، پشاور، کوہاٹ، بنو 145روپے فی کلو، 1690روپے گھریلو سلنڈر،راولپنڈی، اسلام آباد160روپے فی کلو، 1870روپے گھریلو سلنڈر، مری نتھیا گلی، مظفرآباد، باغ، آزادکشمیر ، فاٹا 165روپے فی کلو، گھریلو سلنڈر1930روپے ہو گیا ہے۔

مزید : صفحہ اول