سکائپ اور واٹس ایپ صارفین کیلئے انتہائی تشویشناک خبر، حکومت نے پابندی لگانے کیلئے انوکھا حربہ ڈھونڈلیا

سکائپ اور واٹس ایپ صارفین کیلئے انتہائی تشویشناک خبر، حکومت نے پابندی لگانے ...
سکائپ اور واٹس ایپ صارفین کیلئے انتہائی تشویشناک خبر، حکومت نے پابندی لگانے کیلئے انوکھا حربہ ڈھونڈلیا

  


اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) سکائپ، واٹس ایپ، فیس بک و دیگر مفت کالز سروسز فراہم کرنے والی ایپلی کیشنز اور ویب سائٹس کے صارفین کے لیے بری خبر ہے کہ حکومت ان سروسز کے لیے ایک ریگولیٹری نظام وضع کرنے جا رہی ہے جس کے تحت انہیں پاکستان میں اپنی سروسز جاری رکھنے کے لیے پی ٹی اے سے لائسنس حاصل کرنا پڑے گااور اس کے بعد سروسز اپنا یہ بوجھ اپنے صارفین کے کندھوں پر ڈال دیں گی اور مفت کالز کی سروس بند کرکے صارفین سے فیس وصول کریں گی۔قومی اسمبلی کی اکنامک کوآرڈینیشن کمیٹی نے نظرثانی شدہ ٹیلی کام پالیسی 2015ءکی منظوری دے دی ہے اور پی ٹی اے اختیار دے دیا ہے کہ وہ ان کمپنیوں کی لائسنسنگ کے لیے فریم ورک تیار کرے۔

مزید جانئے: وہ ملک جہاں ایپل نے آئی فون کی قیمتوں میں 50 فیصد کمی کردی

نیوز ویب سائٹ ’پروپاکستانی‘ کی رپورٹ کے مطابق پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی نے جب فریم ورک تیار کر لیاتو ان کمپنیوں کو پاکستان میں آپریٹ کرنے کے لیے حکومت سے لائسنس لینا ہو گا یاپھر ملک میں ان کی سروسز بند کر دی جائیں گی۔حکومت کی طرف سے اس اقدام کے دفاع میں موقف پیش کیا گیا ہے کہ ملک میں دہشت گردی کے خطرے کے پیش نظر یہ اقدام کیا جا رہا ہے۔ دوسری طرف ماہرین نے اس حکومتی اقدام کو غیردانشمندانہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ان سروسز کو ریگولیٹ کرنے کی پالیسی قابل عمل ہی نہیں۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی


loading...