این اے 128دھاندلی کیس ، نادرا کو انگوٹھوں کے نشانات سے متعلق رپورٹ 5نجوری کو پیش کرنے کا حکم

این اے 128دھاندلی کیس ، نادرا کو انگوٹھوں کے نشانات سے متعلق رپورٹ 5نجوری کو ...

 لاہور(نامہ نگار)این اے 128مبینہ دھاندلی کیس میں نادرا نے ووٹوں سے متعلق پری سکیننگ رپورٹ الیکشن ٹربیونل میں پیش کردی ہے۔الیکشن ٹربیونل نے نادرا کو بیلٹ پیپرز پر انگوٹھوں کے نشانات سے متعلق رپورٹ 5جنوری کو پیش کرنے کا حکم دے دیاہے،اسی طرح پی پی 160میں بھی نادرا کو رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔این اے 128سے پی ٹی آئی کے امیدوار ملک کرامت علی کھوکھر نے لیگی ایم این اے ملک افضل کھوکھر کے خلاف جبکہ پی پی 160سے تحریک انصافکے امیدوار ملک ظہیر عباس کھوکھر نے نون لیگ کے ایم پی اے ملک سیف الملوک کھوکھر دھاندلی کیسز دائر کر رکھے ہیں ،گزشتہ روز الیکشن ٹربیونل محمد رشید قمر نے دونوں کیسز کی سماعت کی۔کئی ماہ قبل سابق الیکشن ٹربیونل کاظم علی ملک کے حکم پر قومی اور صوبائی دونوں حلقوں کے بیلٹ پیپرز پر ووٹرزکے انگوٹھوں کے نشانات کی فرانزک سکیننگ کے لئے ووٹوں کے تھیلے نادراکوارسال کئے گئے تھے ،اب نادارا کی جانب سے این اے 128کے ریکارڈ کے بارے میں پری سکیننگ رپورٹ الیکشن ٹربیونل میں پیش کردی گئی ہے ۔کیس کی سماعت کے دروان عدالت نے ووٹرز کے انگھوٹوں کے نشانات اور شناختی کارڈز کی فرانزک رپورٹ پیش کرنے کی بجائے پری سکیننگ پورٹ ارسال کرنے پر عدم اطمینان کا اظہار کیاہے۔عدالت نے قرار دیا ہے کہ این 128اور پی پی 160کا علاقہ اور ووٹرز ایک ہیں اس لئے دنوں کیسز کی ایک ساتھ ساعت ضروری ہے۔الیکشن ٹربیونل نے نادار کو حکم دیا کہ 5جنوری تک ہر صورت میں قومی اور صوبائی دنوں حلقوں کی بیلٹ پیپرز پر ووٹرز کے انگھوٹوں کے نشانات اور شناختی کارڈز سے متعلق فرانزک رپورٹ پیش کی جائے تاکہ کیس میں کاروائی میں مزید تاخیر نہ ہو۔

مزید : علاقائی


loading...