جبری مشقت روکنا حکومت کی ذمہ داری ہے،رضا ربانی

جبری مشقت روکنا حکومت کی ذمہ داری ہے،رضا ربانی

اسلام آباد(نمائندہ خصوصی) قائمقام صدر اور چیئرمین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہا ہے کہ حکومت پاکستان اور ریاست پاکستان کی ذمہ داری ہے کہ جبری مشقت کو روکنے اور اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ کے حوالے سے موجودہ قوانین پر عمل درآمد یقینی بنائیں ۔ان خیالات کا اظہا ر انہوں نے ماہانامہ جریدہ ’’اطراف ‘‘کی جانب سے منعقدہ ایوارڈ تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔تقریب ایسے پاکستانیوں کو خراج تحسین پیش کرنے کیلئے منعقد کی گئی تھی جنہوں نے مختلف شعبوں میں عوام کی فلاح کیلئے اقدام اٹھائے ہیں۔ میاں رضاربانی نے مزید کہا کہ وقت کی ضرورت ہے کہ پاکستان کی مڈل کلاس کسان اور مزدور طبقے کو طاقت کو سرچشمہ بنایا جائے ۔اور ایسا کرنے سے ہی ملک ایک نئی سمت میں ترقی پر گامزن ہو سکے گا ۔انہوں نے کہا کہ یہ ہماری بد قسمتی ہے کہ ہم اپنے قابل اور ذہین لوگوں کی خدمات کو تسلیم نہیں کرتے اور نہ ہی ملک کی ترقی کیلئے انہیں استعمال کرتے ہیں۔قائمقام صدر نے کہا کہ 1947 سے لے کر اب تک پاکستان کی شہری اور دیہی اشرافیہ نے پاکستان کے وسائل پر اپنا تسلط قائم کیے رکھا جس کی وجہ سے قیادت اور عام لوگوں میں فاصلے بڑھتے گئے ۔ اس کے نتیجے میں معاشرہ بکھر رہا ہے اور کوئی بھی نظام مناسب طریقے سے پروان نہیں چڑ ھ سکا ۔ وفاق پاکستان کو جراتمندانہ اور تلخ فیصلے لینے کی ضرورت ہے ۔قائمقام صدر میاں رضاربانی نے کہاکہ آج کا پاکستان اُس پاکستان کا عکاس نہیں ہے جس کا نظریہ قائداعظم نے پیش کیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ آج کی تقریب میں پاکستانیوں کا کام دیکھ کر ایسا لگا جسے آج پاکستان کا اصلی چہرہ سامنے آیاہے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ اول


loading...