وہ وقت جب وسیم اکرم شعیب اختر سے جلنے لگے اور ایسی حرکت کردی کہ۔۔۔

وہ وقت جب وسیم اکرم شعیب اختر سے جلنے لگے اور ایسی حرکت کردی کہ۔۔۔
وہ وقت جب وسیم اکرم شعیب اختر سے جلنے لگے اور ایسی حرکت کردی کہ۔۔۔

  


لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کرکٹ کے سابق کپتان وسیم اکرم کی شاہکار باﺅلنگ کے بارے میں تو آپ نے سن رکھا ہوگا اور آپ شعیب اختر کی تیز ترین گیندوں سے بھی آشنا ہوں گے لیکن آپ کو جان کر شائد حیرت ہوکہ ایک وقت ایسا بھی آیا تھا جب وسیم اکرم شعیب اختر سے جلنے لگے تھے۔

رﺅف کلاسرا نے اپنے ایک کالم میں لکھا ہے کہ1999ءکے ورلڈ کپ میں جب شعیب اختر گیند پھینکنے کے لئے سٹارٹ لیتے تھے تو پوراگراﺅنڈ ان کے ساتھ نعرے لگاتا تھا۔ اپنے کالم میں انہوں نے سابق سینئر بیوروکریٹ مرحوم ظفر الطاف کے ساتھ گزاری گئی یادوں کو تازہ کیا ہے۔ ظفر الطاف جو پاکستان کرکٹ بورڈ کے ساتھ بھی کام کرچکے تھے اور وسیم اکرم اور شعیب اختر کو بہت پسند بھی کرتے تھے۔ رﺅف کلاسرا اپنے کالم میں لکھتے ہیں : ”ڈاکٹر الطاف کی وسیم اکرم کے ساتھ بہت قربت تھی۔اسے دنیا کا بہترین باﺅلر سمجھتے تھے۔ تاہم انہیں وسیم اکرم سے اس وقت مایوسی ہوئی جب برطانیہ کے ورلڈ کپ میں انہوں نے دیکھا کہ وسیم اکرم کپتان کے طور پر شعیب اختر کے ساتھ برا سلوک کر رہا ہے۔ منیجر کے طور پر انہوں نے وسیم اکرم سے بات کی کہ اسے کپتان کے طور پر شعیب اختر کو اس طرح آگے لانا چاہیے جیسے کبھی عمران خان اسے لایا تھا۔ اگر عمران وہی رویہ اس کے ساتھ رکھتا جیسا وہ اب شعیب اختر کے ساتھ رکھ رہا ہے تو کیا وہ اپنی جگہ بنا پاتا؟ تاہم ڈاکٹر ظفرالطاف کو محسوس ہوا ‘وسیم اکرم کو لگ رہا تھا اس کا دور ختم ہورہا تھا اور شعیب اختر کا سورج طلوع ہورہا تھا۔ وسیم اکرم بھی انسان تھا۔ جب شعیب اختر دوڑتا تھا تو پورا گراﺅنڈ اس کے ساتھ نعرے لگاتا تھا۔ وسیم اکرم اس بات کو انجوائے کرنے کی بجائے شعیب اختر کے خلاف ہوگیا تھا۔ ڈاکٹر ظفرالطاف کو اب فیصلہ کرنا تھا کہ اس نے وسیم اکرم کے ساتھ اپنی پرانی دوستی نبھانی تھی یا پھر اسے ایک نئے فاسٹ باﺅلر کا ساتھ دینا تھا جو پاکستان کا فیوچر تھا۔ظفرالطاف نے ایک اہم فیصلہ کیا۔ انہیں پتہ تھا کہ ورلڈکپ جیتنا تھا تو پھر وسیم اکرم کو شعیب اختر کو وہ جگہ اور عزت دینا ہوگی جس کا وہ مستحق تھا۔“

یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ 1999ء کے ورلڈ کپ میں پاکستان کو شکست ہوئی تھی اور شعیب اور وسیم اکرم کے اختلافات اس وقت زبان زدوعام تھے۔ناقدین کا کہنا ہے کہ اگر وسیم اکرم صحیح طریقے سے شعیب اختر کا استعمال کرتے تو ورلڈ کپ کے نتائج مختلف ہوسکتے تھے۔

مزید : کھیل


loading...