پاکستانی حکومت کشمیریوں میں انتشاراورتقسیم کے بجائے اتفاق اوریکجہتی پیدا کرنے کے لیے اپنا کردار ادا کرے: سردارعتیق احمد خان

پاکستانی حکومت کشمیریوں میں انتشاراورتقسیم کے بجائے اتفاق اوریکجہتی پیدا ...
پاکستانی حکومت کشمیریوں میں انتشاراورتقسیم کے بجائے اتفاق اوریکجہتی پیدا کرنے کے لیے اپنا کردار ادا کرے: سردارعتیق احمد خان

  


مظفر آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)سابق وزیراعظم آزاد سردارعتیق احمد خان نے کہا ہے کہ غیر ریاستی سیاسی بیساکھیاں کمزور ہو تی جا رہی ہیں،

پاکستان کی قیادت کشمیریوں میں انتشاراورتقسیم کے بجائے اتفاق اوریکجہتی پیدا کرنے کے لیے اپنا کردار ادا کرے، حکومت پاکستان کے اسباب و وسائل یا کشمیر کونسل کا پیسہ قائداعظم کی جماعت مسلم کانفرنس کے خلاف استعمال کرنا پاکستانی مفادات کے قتل عام کے متراد ف ہے ،کشمیر میں موجود ہندوستانی فوج ہماری قاتل اور غاصب ہے جبکہ پاکستانی فوج ہماری محافظ اور دفاع کرنے والی فوج ہے،نجی ٹی وی کے مطابق سردار عتیق احمد خان نے سنگڑھ بٹھارہ کے مقام پر بڑے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مسلم کانفرنس گلگت بلتستان کو صوبہ بنانے کی ہر سازش کا مقابلہ کرے گی، تقسیم کشمیر کی ہر سازش کا راستہ روکیں گے ، کشمیر کونسل کے پیسے کے زور پر انتخابی دخل اندازی بند کی جائے ، بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کو ختم کر کے زلزلہ متاثرین بحالی فنڈز میں تبدیل کیا جائے ، نظریات اور عقائد کے بغیر معاشی ترقی خود فریبی ہے، نئی نسل کے مستقبل کو محفوظ بنانا مسلم کانفرنس کی ترجیحات میں شامل ہے ، نظریہ الحاق پاکستان ہی ہمارے محفوظ مستقبل کی ضمانت ہے ،کارکن مسلم کانفرنس انتخابی معرکہ کی تیاری کریں مسلم کانفرنس کے کارکنوں اپنی دکانوں اور گاڑیوں پر مسلم کانفرنس کے سبز ہلالی پرچم لہرائیں اور سینے پر کشمیر بنے گا پاکستان اور کشمیر توجہ چاہتا ہے کے بیجز لگائیں ، مجاہد اوّل کی فراہم کردہ اصولوں ایثار، اخلاص اور استقامت پر عمل کریں ، کسی دنیاوی قوت سے خوفزدہ ہونا ہمارے عقائد اور ایمان کی توہین ہے۔

مزید : مظفرآباد


loading...