جھوٹی گواہی دینے پر ایم ڈی واسا کے خلاف دائر درخواست پر نوٹس

جھوٹی گواہی دینے پر ایم ڈی واسا کے خلاف دائر درخواست پر نوٹس

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے زمین پر قبضہ نہ دینے کے خلاف کیس میں جھوٹی گواہی دینے پر ایم ڈی واسا کے خلاف دائر درخواست پر نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا ہے۔مسٹر جسٹس عباد الرحمن لودھی نے ایس ایم کامران ایڈووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ 1992ء میں 45ہزار روپے سے واسا سے ملکیتی دستاویزات پر جائیداد خریدی تھی مگر واسا کی جانب سے زمین کا قبضہ نہیں دیا جا رہا تھا جس پر عدالت سے رجوع کرنے پر فیصلہ درخواست گزار کے خلاف دیا گیا جبکہ جائیداد کا قبضہ دینے کے کیس میں ایم ڈی واسا زاہد عزیز نے جھوٹی گواہی دی تھی ،ایم ڈی واسا کے خلاف تعزیرات پاکستان کی دفعہ 192اور 193کے تحت کارروائی کی جائے، عدالت نے ابتدائی سماعت کے بعد ایم ڈی واسا کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...