خیبر پختونخوا اسمبلی ، فاٹا کو خیبر پختونخوا کا حصہ بنانے کی قرار داد منظور ، جے یو آئی (ف) کی بھر پور مخالفت

خیبر پختونخوا اسمبلی ، فاٹا کو خیبر پختونخوا کا حصہ بنانے کی قرار داد منظور ...

پشاور (آئی این پی ) خیبرپختونخوااسمبلی نے فاٹاکوخیبرپختونخواکاحصہ بنانے کے حوالے سے قرارداد متفقہ طور پر منظورکرلی تاہم بعدازاں نکتہ اعتراض پر جے یوآئی نے انضمام کی مخالفت کی ،صوبائی اسمبلی میں قرار داد صوبائی وزیر قانون امتیازشاہدقریشی نے پیش کی جس میں کہاگیاکہ فاٹا کوجغرافیائی حدود کی وجہ سے فوری طو رپر خیبرپختونخواکاحصہ بنایاجائے ،اس حوالے سے جوآئینی رکاوٹیں ہیں انہیں دورکرنے کے حوالے سے وفاق و قومی اسمبلی اپناکرداراداکرے ،خیبرپختونخوااسمبلی اس متعلق متعددقراردادپاس کرچکی ہے ،اس لئے فاٹاکے عوام کی خواہشات کو مدنظررکھتے ہوئے فیصلہ کیاجائے ، آئین کے مطابق فاٹاکوخیبرپختونخوامیں ضم کیاجائے ،اس سے متعلق جوتاخیری حربے اختیار کئے جارہے ہیں ،اس کے باعث قبائلی عوام کی مشکلات میں مزید اضافہ ہورہاہے ،اس لئے وفاقی حکومت فوری طور پر تمام رکاوٹیں دور کرکے فاٹاکوخیبرپختونخواکاحصہ بنائے ۔ قراردادکے متفقہ پاس ہونے کے بعد جے یوآئی کے مفتی سید جانان نے کہاکہ فاٹاکوخیبرپختونخواکاحصہ بنانے کا فیصلہ ایک دن میں نہیں ہوسکتا اس کیلئے سیاسی مفاہمت کی ضرورت ہے جبکہ جے یوآئی کے انضمام کی مخالفت کے حوالے سے جو موقف ہے ابھی تک اس پر قائم ہیں لہٰذا چند مخصوص افراد فاٹاکے مستقبل کا فیصلہ نہ کرے بلکہ قبائلی عوام کو خود ان کے مستقبل کے فیصلے کاحق دیاجائے۔

خیبرپختونخوا اسمبلی/قرارداد

مزید : صفحہ اول