تمام طبقات ، قانون اور ’’رول آف دی گیم ‘‘ کا احترام کریں ، صدر مملکت

تمام طبقات ، قانون اور ’’رول آف دی گیم ‘‘ کا احترام کریں ، صدر مملکت

اسلام آباد(آئی این پی)صدر مملکت ممنون حسین نے کہا ہے کہ باہم دست و گریباں سیاسی اور غیر سیاسی قوتوں سے اپیل ہے کہ وہ قائد اعظمؒ کی نصیحت کے مطابق قانون اور رول آف دی گیم کا احترام کریں، اگر کسی معاملے میں کچھ مسائل ہیں تو بہتر طریقہ یہ ہے کہ سب مل بیٹھیں اور حب الوطنی و خیر خواہی کے جذبے کے تحت پوری نیک نیتی اور اتحادکے ساتھ ان گتھیوں کو سلجھا لیں۔ ان خیالات کا اظہار صدر مملکت نے بابائے قوم قائداعظمؒ کی سالگرہ کے حوالے سے ایوان صدر میں منعقد ہونے والی ایک خصوصی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پرچیئرمین ہائر ایجو کیشن کمیشن ڈاکٹر مختار احمد، ممتاز ترک اسکالر اور یونس ایمرے انسٹی ٹیوٹ ترکی کے ڈائریکٹر پروفیسر ڈاکٹر خلیل طوقار اور ممتاز ادیب اور دانشور پروفیسر ڈاکٹر طاہر مسعود نے بھی خطاب کیا۔ صدر مملکت نے کہا کہ یہ بڑے دکھ کی بات ہے کہ اتحاد کا جو سبق ہمارے بزرگوں نے قیام پاکستان سے بھی پہلے ہمیں سکھا یاتھا، آزادی کے بعداسے بھلا دیا گیاجس کے نتیجے میں قیام پاکستان کے تھوڑے ہی عرصے کے بعدہی وطن عزیز میں سیاسی بے اصولی اور قانون شکنی کے مظاہرعام ہو گئے لیکن ماضی قریب اور خاص طورپر موجودہ دور میں تو صورت حال بہت بگڑچکی ہے۔ آج سیاسی، معاشی، معاشرتی، مذہبی، انتظامی، حتی کہ دشمن کے ساتھ نمٹنے جیسے اہم ترین معاملات میں بھی جن دشواریوں کا ہمیں سامنا ہے، اس کی جڑیں قانون کے عدم احترام اور رولز آف دی گیم کی خلاف ورزی میں مضمر ہیں۔ اس طرز عمل کی فوری طور پراصلاح نہ کی گئی تو صاف نظر آ رہا ہے کہ معاملات آگے چل کر بالکل ہی ہاتھ سے نکل جائیں گے۔ خدانخواستہ یہ صورت حال پیدا ہو گئی تو مجھے ڈر ہے کہ ہمیں شاید سنبھلنے کا موقع بھی نہ مل سکے۔ اس طرح ملک ایسے پیچیدہ مسائل میں الجھ جائے گا جس کے نتیجے میں اقتصادی استحکام اور ترقی و خوشحالی کے وہ تمام خواب کبھی شرمند تعبیر نہ ہو سکیں گے جو آج بڑی امیدوں کے ساتھ دیکھے جارہے ہیں۔ اس لیے میں قوم کے ہر طبقے، خاص طور پر نوجوانوں کو نصیحت کرتا ہوں کہ وہ نظام حکومت کے بے وقت اور غیر ضروری مباحث سمیت ہر قسم کے سیاسی و غیر سیاسی بکھیڑوں سے لاتعلق ہو کر قومی ترقی و خوش حالی کے عظیم مقصد پرمتحد ہو جائیں۔

صدر مملکت

مزید : صفحہ اول