متحدہ علماء محاذ کے تحت ’’یوم تحفظ بیت المقدس ‘‘منایا گیا

متحدہ علماء محاذ کے تحت ’’یوم تحفظ بیت المقدس ‘‘منایا گیا

کراچی ( اسٹاف رپورٹر )متحدہ علماء محاذ پاکستان کے زیر اہتمام آج یوم تحفظ بیت المقدس منایا گیا اس موقع پر 300 سے زائد مختلف مکاتب فکر کے علماء مشائخ نے واضح دوٹوک الفاظ میں امریکی اعلان مسترد کرتے ہوئے کہا کہ بیت المقدس میں اسرائیل سفارتخانہ کسی طور بھی قبول نہیں، غیور مسلمان قبلہ اول کے تحفظ وتقدس کیلئے ہر قیمت چگانے ہر قربانی دینے کیلئے تیار ہیں، سر سے کفن باندھ کر امریکی واسرائیل عزائم کا مقابلہ کیا جائیگا ،امت مسلمہ تحفظ بیت المقدس کیلئے متحد و بیدار ہے مسلم حکمران بیت المقدس کی آزادی کیلئے مشترکہ اسلامی فوج تشکیل دیں اس موقع پر مرکزی صدر علامہ مرزا یوسف حسین ودیگر علماء نے مسجد و امام بارگاہ نور ایمان (ناظم آباد) کے باہر احتجاجی مظاہرے سے خطاب کیا جبکہ متعدد مساجد کے باہر امریکی و اسرائیلی پرچم نذر آتش کیئے گئے اجتماعات سے متحدہ علماء محاذ کے بانی و سیکر ٹری جنرل مولانا محمد امین انصاری ، مولانا قاری اللہ داد، علامہ عبد الخالق فریدی،مولانا سلیم اللہ ترکی،علامہ شاہدین اشرفی،علامہ عبدالوحید نورانی،مولانا جعفرالحسن تھانوی، علامہ مرتضی خان رحمانی۔علامہ شاہ فیروز الدین رحمانی،مفتی محمد بخاری،مفتی وجیہہ الدین، علامہ روشن الدین ، مطلاب اعوان ،علامہ اختر محمدی،علامہ شوکت مغل،مولانا منظرالحق تھانوی،مفتی ساجد یار خان،مفتی شبیر احمد،مفتی منیب الرحمن بنوری،مفتی حارث، مفتی طارق الیاس،قاری انوار حمیدی ،علامہ غلام مصطفی رحمانی و دیگر نے خطاب کیا

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...