سندھ میں زمینوں کے ریکارڈ میں کرپشن پرریفرنس کی سماعت

سندھ میں زمینوں کے ریکارڈ میں کرپشن پرریفرنس کی سماعت

کراچی ( اسٹاف رپورٹر ) کراچی کی احتساب عدالت میں جمعہ کوسندھ میں زمینوں کے ریکارڈ میں کرپشن پر دائر سب سے بڑے ریفرنس کی سماعت ہوئی ۔ عدالت نے ریفرنس کے نامزد ملزم لطیف بروہی کی جانب سے وعدہ معاف گواہ بنانے کی درخواست چیئرمین نیب کو بھیجنے کا حکم دے دیا ہے ۔ جمعہ کو کراچی کی احتساب عدالت میں سابق سیکرٹری لینڈ اینڈ یوٹیلائزیشن و دیگر کے خلاف زمینوں کے ریکارڈ میں 53 ارب روپے کرپشن سے متعلق ریفرنس کی سماعت ہوئی ۔ عدالت میں ریفرنس کے نامزد ملزم لطیف بروہی کی جانب سے وعدہ معاف گواہ بنانے کے لیے درخواست دائر کرائی گئی ۔ ملزم لطیف بروہی نے موقف اختیار کیا کہ جب تک درخواست کا جواب نہیں آتا ، ان پر فرد جرم عائد نہ کی جائے ۔ عدالت نے ریمارکس دیئے کہ ریفرنس میں گریڈ 19 کا افسر بھی ملزم ہے ۔ وعدہ معاف گواہ بنانے کی درخواست چیئرمین نیب کو بھیجی جائے ۔ عدالت نے شازر شمعون ، قائم تھہیم اور اسماعیل بلوچ کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کرتے ہوئے مزید سماعت 18 دسمبر تک ملتوی کر دی ۔ واضح رہے کہ ملزمان پر سی شور دیہہ کورنگی میں 530 ایکڑ زمین کی جعلی اور بوگس انٹری کے ذریعہ قومی خزانے کو 53 ارب روپے نقصان پہنچانے کا الزام ہے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر