کراچی، القدس ملین مار چ کی تیاریاں عروج پر پہنچ گئیں

کراچی، القدس ملین مار چ کی تیاریاں عروج پر پہنچ گئیں

کراچی (اسٹاف رپورٹر ) جماعت اسلامی کے تحت اتوار17دسمبر کو نیپا چورنگی تا حسن اسکوائر تک ہوے والے ’’القدس ملین مارچ ‘‘ کے سلسلے میں شہر بھر میں اہم شاہراؤں و چورنگیوں اور اہم پبلک مقامات پر کیمپ قائم کر دیئے گئے ہیں ۔امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے حسن اسکوائر پر قائم کیے گئے مرکزی کیمپ کا افتتاح کیا اور جماعت اسلامی کے کارکنوں اور میڈیا کے نمائندوں سے خطاب کیا ۔حافظ نعیم الرحمن نے کیمپ کے افتتاح کے بعد شہریوں میں ہینڈ بلز بھی تقسیم کیے اور ان کو ’’القدس ملین مارچ ‘‘ میں شر کت کی دعوت دی ۔حافظ نعیم الرحمن نے پرائیویٹ گاڑیوں ،پبلک ٹرانسپورٹ ،رکشوں اور موٹر سائیکل سواروں کو فرداً فرداً ہینڈ بلز دیئے ۔اس مو قع پر گفتگو کر تے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں کراچی کی ماؤں ، بہنوں ، مزدوروں ، طلباء ، علماء کرا م سے اپیل کرتا ہوں کہ بیت المقدس کا تحفظ کرنے والوں میں شامل ہونے کے لیے 17دسمبر کے ’’القدس ملین مارچ ‘‘ میں ایمانی جذبے سے سرشار ہوکر شرکت کریں اور اسرائیل کو یہ پیغا م دیں کہ ہم حماس اور غزہ کے مجاہدین کے ساتھ ہیں اور گریٹر اسرائیل منصوبے کا خواب کبھی پورا نہیں ہونے دیں گے ۔انہوں نے کہا کہ یہ مارچ صرف جماعت اسلامی کا نہیں بلکہ تمام اہل اسلام کا ملین مارچ ہے ، قبل�ۂ اول کے احترام اس کے تقدس اور امت کے اتحاد کے اظہارکے لیے ہے ۔ ہم یہ پیغام دینا چاہتے ہیں کہ امت مسلمہ اپنے دینی شعار کے تحفظ کے لیے تیار ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ فلسطین میں جو لوگ جدوجہد کررہے ہیں اور بیت المقدس میں نماز پڑھتے ہوئے شہید ہورہے ہیں ان کو پاکستان کے مسلمانوں کی حمایت سے حوصلہ ملتا ہے اور وہ اپنے نعروں میں پاکستان کو اپنے ساتھ پاتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ حکمرانوں کو بیداکرنے کے لیے اور یہودیوں پر ہیبت طاری کرنے کے لیے سڑکوں پر آنا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ اہل ایمان اپنی آخرت کو سنوارنے کے لیے قبل�ۂ اول کے تحفظ کرنے والوں میں شامل ہوں اور ملین مارچ میں بھرپور شرکت کریں ۔دریں اثناء جماعت اسلامی کے تحت ’’القدس ملین مارچ ‘‘ کی تیاریاں عروج پر پہپنچ گئیں ہیں ۔مارچ میں لاکھوں مرد و خواتین کی شر کت کے پیشِ نظر بڑے پیمانے پر انتظامات کیے جا رہے ہیں ۔شہر بھر میں مردو خواتین کارکنان اور ذمہ داران رابطہ عوام مہم میں مصروف عمل ہیں ۔جمعے کی نماز کے بعد شہر بھر کی سینکڑوں مساجد میں لاکھوں کی تعداد میں ہینڈ بلز تقسیم کیے گئے اور شہریوں کو مارچ میں شر کت کی دعوت دی گئی ۔علاوہ ازیں درجنوں مساجد کے باہر مظاہرے بھی کیے گئے جن میں مختلف پلے کارڈز اور بینرز کے ذریعے القدس کے حالیہ مسئلے کو اُجاگر کیا گیا اور القدس کو اسرائیلی دارالحکومت تسلیم کر نے کے امریکی فیصلے کی شدید مذمت کی گئی ۔علاوہ ازیں ’’القدس ملین مارچ ‘‘ کے سلسلے میں شہر بھر میں بڑی تعداد میں بینرز آویزاں کر دیئے گئے ہیں اور پوسٹر بھی لگائیں گئے ہیں اور شہریوں سے ملین مارچ میں شر کت کی اپیل کی گئی ہے ۔جماعت اسلامی حلقہ خواتین کے تحت شہر بھر میں ’’القدس ملین مارچ ‘‘ کی تیاریاں اور خواتین سے رابطوں کا سلسلہ تیزری سے جاری ہے اور خواتین کارکنان اور ذمہ داران رہائشی حلقوں اور علاقوں میں بھر پور طریقے سے سر گرمِ عمل ہیں ۔تاجر تنظیموں ،تاجر رہنماؤں اور مزدور رہنماؤں اور تنظمیوں کی جانب سے بھی ’’القدس ملین مارچ ‘‘ کی حمایت کا اعلان کیا گیا ہے اور بھر پور شر کت کی یقین دہانی کرائی گئی ہے۔ علاوہ ازیں ’’القدس ملین مارچ ‘‘ کی مرکزی انتظامی کمیٹی کا اجلا س محمد صابر کی زیر صدارت ادارہ نور حق میں ہو ا جس میں میڈیا اور پبلسٹی سمیت دیگر ذیلی کمیٹیوں کے ذمہ داران نے شر کت کی اور انتظامات کا جائزہ لیا گیا اور اہم فیصلے اور اقدمات کیے گئے ۔اجلاس میں طے کیا گیا کہ ’’القدس ملین مارچ ‘‘ کے تمام مردو و خواتین شر کاء شہر بھر سے نیپا چورنگی پہنچیں گے اور وہاں سے حسن اسکوائر تک مارچ کیا جائے گا ۔سڑک کا ایک ٹریک مردوں اور دوسرا خواتین کے لیے مختص ہو گا ۔حسن اسکوائر پر سڑک کی بلائی گزر گاہ کے اوپر اسٹیج بنایا جائے گا جہاں سے قائدین خطاب کریں گے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر