فیصلہ درست آتا تو پی ٹی آئی رہتی نہ ہی عمران خان :دانیال عزیز

فیصلہ درست آتا تو پی ٹی آئی رہتی نہ ہی عمران خان :دانیال عزیز

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور وفاقی وزیر دانیال عزیز نے کہاہے کہ اگرفیصلہ درست آتا تو نہ پی ٹی آئی رہتی اور نہ ہی عمران خان رہتے۔سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے رہنما دانیال عزیز نے کہاکہ جہانگیر ترین کو قربان کرکے انصاف کا دکھاوا کرنا اورعمران خان اور پی ٹی آئی کو بچانا مقصود تھا حالانکہ عمران خان کے وکیل کا اعترافی بیان موجود ہے جو اخباروں کی زینت بنا۔وفاقی وزیر نے کہا کہ عمران نے خود کہا کہ ڈالرز منگوا کر پوری جماعت کا قرض اتارا، عمران خان کو جو ڈالرز ملے اس کی کیوں تحقیقات نہیں کرائی جارہی۔دانیال عزیزنے کہا کہ نوازشریف کے کیس میں 1962 تک چلے گئے، کیا نوازشریف اہل نہیں تھے کہ انہیں بھی پانچ سال کا ریلیف دیاجاتا، کیا وہ پاکستان کے منتخب وزیراعظم نہیں تھے۔

مزید : کراچی صفحہ اول


loading...