سانحہ پشاور، پی ایس ایل فرنچائز پشاور زلمی نے اے پی ایس کے طلباءکو ہمیشہ یاد رکھا اور رکھے گی

سانحہ پشاور، پی ایس ایل فرنچائز پشاور زلمی نے اے پی ایس کے طلباءکو ہمیشہ یاد ...
سانحہ پشاور، پی ایس ایل فرنچائز پشاور زلمی نے اے پی ایس کے طلباءکو ہمیشہ یاد رکھا اور رکھے گی

  


پشاور (ڈیلی پاکستان آن لائن) آرمی پبلک سکول (اے پی ایس) پشاور پر دہشت گردوں کے بزدلانہ حملے میں شہید ہونے والے بچوں کی آج تیسری برسی منائی جا رہی ہے اور پورا پاکستان ان بچوں کو یاد کرنے میں مصروف ہے جبکہ پشاور زلمی اس میں پیش پیش ہے۔

پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کے دوسرے ایڈیشن کی فاتح فرنچائز پشاور زلمی نے صحیح معنوں میں ان شہید بچوں کی قربانی کو ناصرف یاد رکھا بلکہ انہیں سپورٹ کرنے کیلئے ہمیشہ عملی اقدامات اٹھائے۔ 

پشاور زلمی فرنچائز کے مالک جاوید آفریدی نے اے پی ایس حملے کے بعد یہ تہیہ کیا کہ ہر موقع پر ان بچوں کو یاد رکھا جائے گا اور یہی وجہ ہے کہ پشاور زلمی نے اپنے لوگو کی تقریب رونمائی اے پی ایس میں منعقد کی جس میں شاہد آفریدی، جاوید آفریدی اور محمد اکرم نے شرکت کی۔

بعد ازاں پی ایس ایل کے پہلے ایڈیشن کی افتتاحی تقریب میں اپنے خرچ پر آرمی پبلک سکول پشاور کے 152 طلباءکو لے کر گئے تاکہ دنیا کو یہ پیغام دیا جا سکے کہ پاکستانی قوم ہمت نہیں ہاری۔ پشاور زلمی نے دنیا کو یہ پیغام بھی دیا کہ وہ ناصرف ملک میں تعلیم کو فروغ دے گی بلکہ اے پی ایس کے بچوں کی سپورٹ بھی کرتی رہے گی۔

جاوید آفریدی نے یہ وعدہ بھی کیا کہ جب اگر وہ پی ایس ایل کی ٹرافی جیتے تو اسے آرمی پبلک سکول کے بچوں کے پاس لے کر جائیں گے کیونکہ وہ اس قوم کے اصل ہیرو ہیں۔ انہوں نے اپنا وعدہ پورا کیا اور دوسرے ایڈیشن کا فائنل جیتنے کے دو سے تین روز بعد جاوید آفریدی پاکستان پہنچے تو پی ایس ایل کی ٹرافی اے پی ایس لے کر گئے اور ایک مرتبہ پھر یہ ثابت کیا کہ کچھ بھی ہو جائے پشاور زلمی ہمیشہ ان کے ساتھ رہے گی۔

مزید : کھیل


loading...