جمہوریت کے خلاف بعض قوتیں سرگرم ،حکومتی مدت میں ایک ڈیڑھ ماہ کی کٹوتی کوئی فتح نہیں ہوگی:سینیٹر مولانا عطاء الرحمن

جمہوریت کے خلاف بعض قوتیں سرگرم ،حکومتی مدت میں ایک ڈیڑھ ماہ کی کٹوتی کوئی ...
جمہوریت کے خلاف بعض قوتیں سرگرم ،حکومتی مدت میں ایک ڈیڑھ ماہ کی کٹوتی کوئی فتح نہیں ہوگی:سینیٹر مولانا عطاء الرحمن

  


راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن)جمعیت علمائے اسلام ف کے سینیئر  رہنما سینٹر مولانا عطاء الرحمن نے قراردیا ہے کہ جمہوریت کے خلاف بعض قوتیں سرگرم ہیں ، پاکستان اس وقت سیاسی عدم استحکام کے متحمل نہیں ہوسکتا،سی پیک سے پاکستان کے نئے مستقبل کا تعین ہورہا ہے ، سی پیک اور معاشی ترقی روکنے کے لیے سیاسی بحران پیدا کئے جارہے ہیں ۔

راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے  سینٹر مولانا عطاء الرحمن نے کہا کہ ملک اس وقت بحرانوں کا متحمل نہیں ہوسکتا ہے، حکومت نے اگر ساڑھے چار سال مکمل کرلئے ہیں، موجودہ حکومت کے  چار پانچ ماہ رہ گئے ہیں، اس میں سے اگر کوئی ایک ڈیڑھ ماہ کم کر لیتا ہے اور   اسے اپنی فتح سمجھتا ہے تو یہ فتح نہیں ہوگی۔ ان کا کہنا تھا کہ دین اسلام اور وطن کے خلاف ہر سازش کا ہر محاذ پر مقابلہ کیا جائے گا ،سازشی عناصر آئین کی اسلامی دفعات اور پاکستان کے خلاف سازشوں میں مصروف ہیں، ان کا مقابلہ اتحاد واتفاق سے ہو گا ،جس کی اشد ضرورت ہے ۔انہوں نے کہاکہ اسلام کے نام پر بننے والے ملک کو سیکولر بنانے کی سازشیں عروج پر ہیں لیکن ایسی سازشیں شہدا کی قر بانیوں اور علماء کی چوکیداری کی وجہ سے ناکام ہوئی ہیں اور آئندہ بھی ناکام ہوں گی ،اسلام اس ملک کا مقدر ہے،  پاکستان ایک اسلامی ملک ہے جس میں اسلامی نظام کے نفاذ کے بغیر لوٹ مار اور کرپشن کا خاتمہ نہیں ہو سکتا ،

 عقیدہ ختم نبوتﷺ  اور آئین کی اسلامی دفعات کا تحفظ ہماری جدوجہد کا لازمی اور اہم حصہ ہے۔

مزید : راولپنڈی


loading...