پاک ایران تجارت ایک ارب ڈالر تک پہنچ گئی‘خواجہ حبیب الرحمان

پاک ایران تجارت ایک ارب ڈالر تک پہنچ گئی‘خواجہ حبیب الرحمان

  



لاہور(این این آئی)ایران پاک فیڈریشن آف کلچر اینڈ ٹریڈ کے صدر خواجہ حبیب الرحمان نے کہا ہے کہ پاکستان اور ایران کے درمیان سرحدی تجارت کی سطح ایک ارب ڈالر تک پہنچ گئی ہے جو جلد5ارب ڈالر ہوجائے گی، دو طرفہ تجارت کے فروغ کیلئے دونوں ممالک کو بارٹر سسٹم اور مقامی کرنسی میں لین دین کر نا ہو گا،گوادر اور چابہار بندرگاہیں تجارتی تعلقات کو فروغ میں اہم کردار ادا کرسکتی ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے تہران چیمبر آ ف کامر س کے چیئرمین مسعود خانساری کی قیادت میں ملاقات کیلئے آنے والے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔خواجہ حبیب الرحمان نے کہا کہ خطے میں توانائی شعبے میں اجتماعی تعاون کیلئے ایران کے ساتھ موجودہ گیس منصوبے کی جلد تکمیل ناگزیر ہے کیونکہ ایرانی گیس منصوبہ 750 ایم ایم سی ایف ڈی گیس کی فراہمی کی صلاحیت رکھتا ہے لہٰذااس منصوبے کو تیزی کی بنیاد پر 24 مہینوں میں کیا جاسکتا ہے، دونوں ممالک کے درمیان بینکاری چینل کا فقدان تجارتی تعلقات کی توسیع کی اہم رکاوٹ ہے جس کو دور کرنے کیلئے اب عملی اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے ایران کے ساتھ تفتان، پنجگور، مند اور گبد میں سرحدی مارکیٹوں کی تعمیر میں تیزی پر زور دیتے ہوئے کہا کہ اس سے دو نوں اطراف کی مقامی تجارت کو فروغ دیا جا سکتا ہے۔خواجہ حبیب الرحمان نے کہا کہ تجارت میں اضافے کیلئے ایران نا ن ٹریڈ بیئریرز کے خاتمے کیلئے ضروری اقدامات کرے،پاکستان ایران کو گندم، چینی، چاول اور پھلوں کی برآمد میں اضافہ کر سکتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ گاڑیوں اور ٹرکوں پر عائد ٹیکس اور شاہراؤں کے ٹیکسوں کو ختم کیا جانا چاہیے اس سے سرحدی نقل و حمل اور تجارتی سہولیات حاصل ہوں گی۔

مزید : کامرس