تمام تھانوں سے میڈی کیم کے بورڈ ہٹا دیئے جائیں، پولیس چیف 

تمام تھانوں سے میڈی کیم کے بورڈ ہٹا دیئے جائیں، پولیس چیف 

  



کراچی (کرائم رپورٹر) کراچی پولیس چیف نے پولیس افسران کو حکم دیا ہے کہ مجھے اطلاع ملی ہے کہ مددگار 15والے مختلف علاقوں میں گھر بنانے والے افراد سے پیسے لیتے ہیں آئندہ ایسی شکایات مجھے بھیجی جائیں انھوں نے کہا کہ گھر بنتے ہیں اور پولیس والے پیسے لیتے ہیں اگر مجھے شکایات ملیں تو ذمے دار اہلکاروں کے خلاف ایف آئی آر درج کراؤں گا اور ملازمت سے برطرف کردوں گا، کراچی پولیس چیف نے اپنے احکامات میں کہا کہ تمام تھانوں سے میڈی کیم کے بورڈ ہٹا دیئے جائیں، شہر کے ہر علاقے سے گٹکا مکمل طور پر ختم ہونا چاہیے، جو پولیس اہلکارگٹکا، چرس اور شراب استعمال کرے گا اس کوملازمت سے برطرف کردیا جائے گا انھوں نے ایسے اہلکاروں کے خلاف مکمل رپورٹ دینے کا بھی حکم دیا ہے، انھوں نے کہا کہ گٹکا، شراب اور چرس کی فروخت کا سرٹیفیکیٹ دیا جاتا ہے جو اپنے پولیس والے اور عوام کھاتے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ تمام علاقوں میں کباڑی کتنے ہیں سب پر نظر رکھیں کہ وہ چوری کی موٹرسائیکل کے پارٹس لیتے ہیں یا نہیں، ایڈیشنل آئی جی کراچی نے کہا کہ مقدمات کی تفتیش کے باعث صرف سات سے دس فیصد سزائیں ہوئی ہیں موقع پر کوئی نہیں جاتا، انھوں نے کہا کہ فرد موقع پر بنائی جائے، لوکل اینڈ اسپیشل لاکیس یکم جنوری سے انویسٹی گیشن کو چلے جائیں گے، تفتیشی افسر برآمدگی اور گرفتاری کا میمو اپنے ہاتھوں سے بنائے گا،اگر کوئی افسر یا اہلکار انویسٹی گیشن میں جانا چاہتے ہیں تو بتائیں، انھوں نے کہا کہ انسداد دہشت گردی کے مقدمات صحیح طریقے سے نہیں دیکھے جا رہے اب ہر کیس چیک کیا جائے گا، انھوں نے کہا کہ اے سی آر میں کم تناسب والے کو جبری ریٹائر کردیا جائے گا، پولیس کی گاڑیوں کی ہر ماہ چیکنگ ہوگی، ہفتہ صفائی کے دن کوت، پنکھے، دیواریں صاف کی جائیں گی اور میرے ذاتی نمبر پر واٹس ایپ کریں گے، تمام بینکوں کے باہر بڑے جنریٹر ہٹانے کے لیے بینکوں کو نوٹس دیے جائیں۔

پولیس چیف

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...