فوج میں کس رینک کے افسر کی ریٹائرمنٹ کی عمر کیا ہے ؟تجزیہ کار حامد میر نے بتا دیا

فوج میں کس رینک کے افسر کی ریٹائرمنٹ کی عمر کیا ہے ؟تجزیہ کار حامد میر نے بتا ...
فوج میں کس رینک کے افسر کی ریٹائرمنٹ کی عمر کیا ہے ؟تجزیہ کار حامد میر نے بتا دیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )تجزیہ کار حامد میر نے کہا ہے کہ آرمی چیف کی توسیع سے متعلق سپریم کورٹ کے فیصلے میں سوچنے کے لیے بہت سی باتیں ہیں ،پارلیمنٹ میں اس فیصلے کے حوالے سے بہت سے معاملات زیر بحث آسکتے ہیں ۔سپریم کورٹ نے فیصلے میں آرمی چیف کی توسیع سے متعلق آئینی خلا کی نشاندہی بھی کی ہے ۔نجی نیوز چینل جیو نیوز سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے اپنے فیصلے میں آرمی ریگو لیشن 262اے کا حوالہ دیا جس میں لکھا ہے کہ فوج کا میجر 48،لیفٹیننٹ کرنل 50،کرنل52،بریگیڈئر 53،میجر جنرل 55اور لیفٹیننٹ جنرل 57سال کی عمر میں ریٹائر ہوتا ہے،سپریم کورٹ نے آرمی ریگو لیشن میں تبدیلی کرنے کا اشارہ دیا جبکہ 1993کے قانون میں جنرل کی ریٹائرمنٹ کی عمر کے بارے میں نہیں لکھا گیا ۔ان کا کہنا تھا کہ اچھی بات ہے کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں پارلیمنٹ میں بحث کی جائے اس معاملے پر آئینی خلا ختم ہو جائے تو پاکستانی قوم ،ریاست اور اداروں کا فائدہ ہو گا ۔حامد میر نے مزید کہا کہ سپر یم کورٹ کے فیصلے پر نظر ثانی کی گنجائش نہیں ،اگر ایسا ہوا تو اس کا مطلب ہو گا کہ فیصلے کی سمجھ نہیں آئی۔

مزید : قومی


loading...