ایورنیو اور باری سٹوڈیوز میں دفاترختم،فلورز گودام میں تبدیل

ایورنیو اور باری سٹوڈیوز میں دفاترختم،فلورز گودام میں تبدیل

لاہور(فلم رپورٹر)لاہور کے فلم سٹوڈیوز میں فلمی دفاتر ختم اور فلورز کو گودام بنایا جانے لگا،ایورنیو، باری سٹوڈیوز میں بڑی کمپنیوں نے اپنے گودام بنالئے جن کے بھاری کرایہ سٹوڈیو مالکان وصول کر رہے ہیں، فلمی حلقوں کی اکثریت نے اس صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ آباؤ اجداد کے خون پسینے سے بنائے گئے سٹوڈیوز کی حفاظت کرنا ان کی اولادوں پر فرض تھا جس کو پورا کرنے کے بجائے وہ دولت کما رہے ہیں،فلمی حلقوں کا کہنا ہے کہ اگر سٹوڈیوز کی تزئین و آرائش اور اسے شوٹنگز کے قابل نہ بنایا گیا تو یہ قیمتی سٹوڈیوز ختم ہو جائینگے، گودام بننے پر ہدایت کار الطاف حسین ، سنگیتا ، سید نور، حسن عسکری ، اقبال کشمیری اور دیگر بہت سے ہنرمندوں نے تشویش کا اظہارکیا ہے۔ایورنیو، باری اورنیو شاہ نور سٹوڈیوز میں ماضی کی بے شمار یادگار فلموں کی شوٹنگز اور تقاریب ہوتی رہیں۔

مزید : کلچر