ڈیرہ ،لاہور دھماکہ کے بعد کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ کی شٹر ڈاؤن ہڑتال

ڈیرہ ،لاہور دھماکہ کے بعد کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ کی شٹر ڈاؤن ہڑتال

  

ڈیرہ اسماعیل خان(بیورورپورٹ)لاہور میں خودکش دھماکے کے واقعے اور پنجاب حکومت کے ڈرگ ایکٹ میں ترمیم کے خلاف ڈیرہ اسماعیل خان میں بھی کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ کے زیر اہتمام صبح چھ سے دوپہر ایک بجے تک مکمل شٹر ڈاؤن ،پنجاب حکومت نے ڈرگ ایکٹ میں ترمیم کرکے دوا فروشوں کا معاشی قتل کیا ہے چیئرمین حاجی محمد رمضان۔تفصیلات کے مطابق ملک بھر کی طرح ڈیرہ اسماعیل خان میں بھی کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ ایسوسی ایشن کے زیر اہتمام مطالبات کے حق میں اور لاہور سانحہ کے خلاف صبح چھ بجے سے دوپہر ایک بجے تک مکمل شٹر ڈاؤن ہڑتال کی گئی ۔ تمام دکانیں مکمل بند رہیں جس کی وجہ سے لوگوں کو سخت تکلیف کا سامنا کرنا پڑا سول ہسپتال کے سامنے کیمسٹ اینڈڈرگسٹ نے چیئرمین حاجی محمد رمضان کی قیادت میں مظاہرہ کیا مظاہرے میں سنیئر وائس چیئرمین عبدالعزیز شاہد ،وائس چیئرمین محمد جعفر ،فنانس سیکرٹری خوشحال الرحمن خٹک اور نائب صدر شمس رحمن خٹک و دیگر شریک تھے ۔ اس موقع پر چیئرمین حاجی محمدرمضان نے خطاب میں کہا کہ کیمسٹ اینڈ ڈرگسٹ کے مسائل حکومت فوری طور پر حل کرے پنجاب حکومت نے ڈرگ ایکٹ میں ترمیم کرکے دوا فروشوں کا معاشی قتل کیا ہے ۔ جس کی ہم پر زور مزمت کرتے ہیں اس کالے قانون کی وجہ سے لاکھوں افراد بے روزگار ہوجائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ ہمارے کیمسٹ بھائیوں کی پر امن ریلی پر لاہور میں دہشتگردی کی گئی وہ اپنے حقوق کیلئے احتجاج کررہے تھے اس دہشتگردی میں ہمارے دوا فروشوں کے ساتھ ساتھ پولیس افسران بھی شریک ہوئے ۔ اس واقعے کی پر زور مزمت کرتے ہیں اور شہداء کیلئے دعا گو ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ضلع ٹانک میں ڈرگ انسپکٹر نے شٹر ڈاؤن کے دوران کئی دوکانیں سیل کی ہیں جو غلط اقدام ہے ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ ہمارے یونین کے ساتھ ملکر ڈرگ انسپکٹر اس مسئلے کا حل نکالتے ہوئے ان کو فوری طور پر کھولے ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -