تحصیل کونسل جہانگیرہ میں حزب اختلاف کو فنڈز نہ دینے پر جواب طلب

تحصیل کونسل جہانگیرہ میں حزب اختلاف کو فنڈز نہ دینے پر جواب طلب

  

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ نے تحصیل کونسل جہانگیرہ کے حزب اختلاف کوترقیاتی فنڈزکی ادائیگی کے لئے دائررٹ پر چیف سیکرٹری ٗسیکرٹری لوکل گورنمنٹ اورٹی ا یم او جہانگیر ہ کونوٹس جاری کرکے جواب مانگ لیاہے عدالت عالیہ کے چیف جسٹس یحیی آفریدی اور جسٹس محمدایوب خان پرمشتمل دورکنی بنچ نے یہ احکامات گذشتہ روز تحصیل کونسل کے ممبران حاجی محمدایوب ٗ معرفت شاہ ٗ شوکت حیات اورمس حمیدہ کی جانب سے دائررٹ پرجاری کئے اس موقع پردرخواست گذاروں کے وکیل مزمل خان نے عدالت کو بتایاکہ درخواست گذار تحصیل کونسل جہانگیرہ کے ارکان ہیں جن کاتعلق حزب اختلاف سے ہے اور لوکل گورنمنٹ ایکٹ2013ء کے تحت مقامی حکومتوں کے اختیارات منتخب نمائندوں کو منتقل ہوں گے جن میں انتظامی اورمالی اموربھی شامل ہیں تاہم صوبائی حکومت درخواست گذاروں کو فنڈزفراہم نہیں کررہی ہے اوران کے علاقوں کے ترقیاتی فنڈزغیرمنتخب افراد کو جاری کئے جارہے ہیں جو کہ غیرقانونی اورغیرآئینی اقدام ہے لہذافنڈزدرخواست گذاروں کے ذریعے خرچ کرنے کے احکامات جاری کئے جائیں جس پر فاضل بنچ نے صوبائی حکومت اورمتعلقہ حکام کونوٹس جاری کرکے 21فروری تک جواب مانگ لیاہے ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -