مولانا فضل الرحمان کیخلاف غداری کے مقدمےکی بازگشت پر شیخ رشید احمد بھی میدان میں آگئے، کھل کر بول پڑے

مولانا فضل الرحمان کیخلاف غداری کے مقدمےکی بازگشت پر شیخ رشید احمد بھی میدان ...
مولانا فضل الرحمان کیخلاف غداری کے مقدمےکی بازگشت پر شیخ رشید احمد بھی میدان میں آگئے، کھل کر بول پڑے

  



لاہور(ویب ڈیسک) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے کہا ہے کہ میری ذاتی رائے میں مولانا فضل الرحمان پر آرٹیکل 6 نہیں لگنا چاہیے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مولانا فضل الرحمان اس بار اسلام آباد آئے تو نقص امن کے تحت انہیں دھر لینا چاہیے۔چیئرمین پیپلز پارٹی سے متعلق سوال پر ان کا کہنا تھا کہ بلاول سے میری دل لگی ہے، ان کے ابھی کھیلنے کے دن ہیں، وہ گرفتار نہیں ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ سمجھتا ہوں کہ ن لیگ اور پیپلزپارٹی کوئی تحریک چلانے نہیں جا رہی، شہباز شریف مارچ کے آخری ہفتے وطن واپسی کا ارادہ رکھتے ہیں لیکن میں نے انہیں پیغام پہنچایا ہے کہ ابھی نہ آئیں۔

وزیر ریلوے کا کہنا تھا کہ کہیں بھی جہانگیر ترین اور خسرو بختیار کا نام نہیں ہے اور نہ ہی ان کی کوئی فائل ہے. سیکیورٹی نافذ کرنے والے اداروں کے درمیان فائلوں کا تبادلہ ہوتا رہتا ہے.شیخ رشید کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی ادارے وزیراعظم عمران خان کے ساتھ کھڑے ہیں، انہیں پانچ سال مکمل کرتے ہوئے دیکھ رہا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ لاہوراور گوجرانوالہ کے درمیان شٹل ٹرین کا آغاز کر رہے ہیں، کراچی سرکلر ریلوے کا وزیراعلیٰ سندھ سے مل کر حل نکالیں گے اس میں بہت سی رکاوٹیں ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ عوام سے پانچ سال میں ریلوے کا خسارہ کم کرنے کا وعدہ کیا ہے، کراچی میں ریلوے کی پراپرٹی بیچنے میں کامیاب ہوئے تو خسارہ اس سال ہی ختم ہو جائے گا۔

مزید : قومی