سیاسی رہنمااور معروف بھارتی شاعر کو ایک کروڑ روپے جرمانہ؟ ایسی وجہ سامنے آگئی کہ جان کر آپ کو بھی غصہ آجائے گا

سیاسی رہنمااور معروف بھارتی شاعر کو ایک کروڑ روپے جرمانہ؟ ایسی وجہ سامنے ...
سیاسی رہنمااور معروف بھارتی شاعر کو ایک کروڑ روپے جرمانہ؟ ایسی وجہ سامنے آگئی کہ جان کر آپ کو بھی غصہ آجائے گا

  



نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارت میں بی جے پی سرکاری کی جانب سے مسلمانوں سے امتیازی سلوک کاسلسلہ جاری ہے، حکومتی تعصب سے مسلمان سیاستدان اور شاعر بھی محفوظ نہیں رہے ہیں، حال ہی میں ایک مظاہرے میں شریک ہونے اور وہاں اپنے اشعار پیش کرنے پرضلعی مجسٹریٹ نے کانگریس کے مسلمان رہنما اور بھارت کے معروف شاعر عمران پرتاپ کو ایک کروڑ روپے سے زائد جرمانہ کردیا۔

بھارتی اخبار ہندوستان ٹائمز کے مطابق کانگریس لیڈر اور شاعر عمران پرتاپ گڑھی کو مرادآباد کی عید گاہ میں ہونے والے ایک مظاہرے میں شرکت پرجرمانہ کیاگیا۔ جرمنے کا حکم سناتے ہوئے ضلعی مجسٹریٹ نے کہا کہ مظاہرے کے دوران ریپڈ ایکشن فورس اور صوبائی مسلح کانسٹیبلری کی کمپنیوں کو تعینات کیا گیا تھا جس پرتقریبا ساڑھے تیرہ لاکھ روپے یومیہ خرچ آتا ہے، اور چونکہ نوٹیفکیشن چھ فرور ی سے نافذ العمل تھا اس لئے ان تمام دنوں کا سرکاری خرچ عمران پرتاپ گڑھی سے وصول کیاجائے گا۔نوٹی فکیشن کے مطابق عمران پرتاپ گڑھی کو ایک کروڑچارلاکھ آٹھ ہزار چھ سو ترانوے روپے (بھارتی) ادا کرنا ہوں گے۔

یاد رہے کہ بھارت بھرمیں مسلمان مخالف متعصب بل کیخلاف ملک بھرکی اقلیتیں سراپا احتجاج ہیں، مظاہروں میں لاکھوں مردو خواتین کی شرکت نے دنیا بھرمیں مودی حکومت کی کوششوں کو بے نقاب کیا ہے جس کیخلاف انڈیا کی مثبت خیالات کی حامل کمیونٹی بھی اپنی آواز بلند کرتی رہتی ہے تاہم مودی سرکار ان مظاہروں کو کچلنے کیلئے ہر بھونڈا ہتھکنڈا پنا رہی ہے۔

مزید : بین الاقوامی