مقبوضہ کشمیرکی خصوصی حیثیت میں تبدیلی ،عالمی دباو بڑھنے پربھارتی وزیراعظم مودی کانیا بیان آگیا

مقبوضہ کشمیرکی خصوصی حیثیت میں تبدیلی ،عالمی دباو بڑھنے پربھارتی وزیراعظم ...
مقبوضہ کشمیرکی خصوصی حیثیت میں تبدیلی ،عالمی دباو بڑھنے پربھارتی وزیراعظم مودی کانیا بیان آگیا

  



نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارتی وزیراعظم نریندر مودی ہٹ دھرمی کے نئے ریکارڈ قائم کرنے لگے، کہتے ہیں کہ مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت میں تبدیلی اور شہریت ترمیمی بل ضروری تھے اور یہ کہ وہ عالمی دباو کے باوجود اس فیصلے پر قائم ہیں۔

ٹائمز آف انڈیا اور نجی ٹی وی نائنٹی ٹو نیوز کے مطابق بھارتی ریاست اترپردیش کے شہر وارانسی میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے نریندر مودی نے کہا ہے کہ آرٹیکل تین سو سترمیں تبدیلی نہیں ہوگی وہ اپنے اس فیصلے پر قائم ہیں، انہوں نے اس معاملے پر اقوام عالم کی ناپسندگی کااعتراف کرتے ہوئے بتایا کہ اگرچہ اس پر بین الاقوامی دباوموجود ہے تاہم وہ اس فیصلے کے ساتھ کھڑے ہیں۔

انہوں نے شہریت ترمیمی بل کے حوالے سے بھی بات کی اور موقف اختیار کیا کہ کشمیر سے متعلق بھارتی آئین کے آرٹیکل تین سو ستر اور شہریت ترمیمی بل ضروری تھے اس لئے ان پر عملدرآمد کردیاگیاہے۔

مزید : بین الاقوامی