خاتون کو ہراساں کرنے والا نادرا کا ملازم نوکری سے برطرف

  خاتون کو ہراساں کرنے والا نادرا کا ملازم نوکری سے برطرف

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر) شہر قائد میں نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی (نادرا)میں خاتون ساتھی کو ہراساں کرنے والے ملازم معراج الدین کو نوکری سے برطرف کردیا گیاہے، معراج ہراسگی کے الزام میں پولیس کی حراست میں ہے۔تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے سائٹ ایریا میں واقع نادرا میگا سینٹر کے ملازم معراج الدین کی جانب سے خواتین کو ہراساں کیے جانے کا معاملہ سامنے آیا تھا،جس کے بعد ڈائریکٹر جنرل نادرا نے مذکورہ ملازم کو برطرف کردیا ہے۔ڈی جی نادرا کا کہنا ہے کہ مذکورہ ملازم کے ملازمتی لیٹر کے مطابق معراج الدین ڈیلی ویجز پر ملازمت پر رکھا گیا تھا، ملازم خاتون ساتھی کو ہراساں کرنے میں ملوث پایا گیا اور اس کے خلاف ہراساں کرنے کی درخواست موصول ہوئی تھی۔ڈی جی کے مطابق معراج الدین کو نادرا کے کلاز نمبر 4 کے تحت برطرف کیا گیا ہے اور اسے ایچ آر برانچ رپورٹ کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔معراج کو گزشتہ روز پولیس نے چھاپہ مار کر ہراسگی کے الزام میں گرفتار کیا تھا۔پولیس حکام کے مطابق ڈیٹا انٹری ملازم خواتین کے نمبرز نکلوا کر ان سے رابطے کرتا اور غیر اخلاقی ویڈیوز بھیجتا تھا۔سائٹ اے پولیس کو ناظم آباد ایک نمبر کے رہائشی زاہد عالم نے نادرا ملازم کے خلاف تحریری درخواست دی تھی کہ ایک موبائل فون نمبرسے اس کی اہلیہ کے نمبر پر مسلسل فون کرکے تنگ کیا جارہا ہے،اس نے کال کرنے والے شخص کومنع کیا لیکن وہ باز نہیں نہ آیا اور اہلیہ کو تنگ کررہا ہے اورغیراخلاقی مواد بھی بھیج رہا ہے۔پولیس حکام  کے مطابق واقعے کی تحریری درخواست کے بعد پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے ملزم معراج  الدین کو گرفتار کرلیا جونارتھ کراچی کا رہائشی ہے۔۔پولیس کے مطابق اس کے پاس کئی نمبرز تھے جن سے وہ خواتین کو ناشائستہ میسج بھیج کر ہراساں کیا کرتاتھا۔پولیس نے بتایا کہ ملزم معراج کی گرفتاری ڈرامائی انداز میں عمل میں آئی، ملزم کو متاثرہ خاتون کے شوہر نے ملنے کے لیے بلا کر اسے پکڑ کر پولیس کے حوالے کیا، متاثرہ خاندان نے واٹس ایپ پر بھیجا گیا غیراخلاقی مواد بھی فراہم کردیا گیا ہے۔ گرفتاری کے فوری بعد ملزم نے نہ صرف پولیس بلکہ متاثرہ شہری سے بھی معافی مانگی ہے۔پولیس حکام کے مطابق ملزم کے خلاف تفتیش کے بعد مقدمہ درج کیا جائے گا

مزید :

صفحہ آخر -