سندھ حکومت کے گندم کی قیمتوں کو مسترد کرتے ہیں،خرم شیرزمان

سندھ حکومت کے گندم کی قیمتوں کو مسترد کرتے ہیں،خرم شیرزمان

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کراچی کے صدر خرم شیر زمان اور جنرل سیکریٹری سعید آفریدی نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ سندھ حکومت کے گندم کی قیمتوں کو مسترد کرتے ہیں۔فیصلہ چند مراعات یافتہ خاندانوں کو نوازنے کی کوشش ہے۔گزشتہ سال سستی خریدی گئی گندم اب 5 ہزار میں خریدی جائے گی۔سندھ حکومت عوام کو مضر صحت اور کچرہ ملی گندم فراہم کررہی ہے۔ انصاف ہاوس سے جاری اپنے بیان میں رہنماوں کا مزید کہنا تھا کہ آبادگاروں کے 18 سو کے ریٹ کی بجاء کابینہ وزراء کو فائدہ دینے کے لیے 2 ہزار روپے ریٹ مقرر کیا گیا۔سندھ حکومت آئندہ دنوں میں گندم کا بحران پیدا کرنے کی نئی منصوبہ بندی کررہی ہے۔وفاق دشمنی میں سندھ حکومت زراعت دشمنی کی پالیسی پر گامزن ہے۔سندھ میں سرکاری ریٹ کی بجائے مہنگا ترین آٹا عوام کو فراہم کیا جارہا ہے۔سندھ کی عوام پر محکمہ زراعت کا ڈاکہ قبول نہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ وزیر زراعت سندھ شہید فاضل راہو کی جدوجہد کا تھوڑا سا بھرم رکھ لیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ وفاقی حکومت آئینی اختیار استعمال کرتے ہوئے گندم کے ریٹ پر سندھ حکومت سے جواب طلب کرے۔سندھ میں گندم کی قیمتوں پر سپریم کورٹ سے نوٹس لینے کی اپیل کرتے ہیں۔رہنماوں کا مزید کہنا تھا کہ زرداری لیگ نے نوابشاہ، بلاول نے لاڑکانہ اور مراد علی شاہ نے سیہون میں عوام کے مسائل کو حل کرنے کے لئے کوئی کام نہیں کیا۔ یہ تین نالائقوں کا ٹولا تیرہ سال سے اس صوبے پر قابض ہے۔ 12 دو نمبر سیاسی جماعتیں ا کٹھی ہیں۔یہ جماعتیں ملک میں کرپشن کے نظام کو چلانا چاہتے ہیں۔ اپوزیشن کو عمران خان کی مقبولیت سے تکلیف ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -