سٹیج ڈرامہ کا حُسن فحاشی نے تباہ کیا ، جتنی مذمت کی جائے کم ہے، اجمل ملک

سٹیج ڈرامہ کا حُسن فحاشی نے تباہ کیا ، جتنی مذمت کی جائے کم ہے، اجمل ملک
 سٹیج ڈرامہ کا حُسن فحاشی نے تباہ کیا ، جتنی مذمت کی جائے کم ہے، اجمل ملک

  

لاہور(فلم رپورٹر)سٹیج ڈرامہ کا حُسن فحاشی نے تباہ کیا ہے ،اس کی جتنی بھی مذمت کی جائے وہ کم ہے ،پنجاب میں کمرشل ازم کے نام پر جو کچھ سٹیج پر ہورہا ہے اُس سے بربادی اور تباہی کے سوا کچھ حاصل نہ ہوگا لیکن لاہور کی سطح پر معاملات مسلسل بہتری کی جانب گامزن ہیں ،جبکہ دوسرے شہروں میں معاملات بیان سے باہر ہیں ،اس کی بنیادی وجہ یہ ہے کہ اس شہر کی عوام فحاشی اور بے ہودگی کو رد کرچکے ہیں صرف چند لوگ ایسے ہیں جو آج بھی برائی کو دیکھنا چاہتے ہیں لیکن اُن کے لئے اکثریت کی رائے کو فراموش نہیں کیا جاسکتا۔گزشتہ روز شالیمار تھیٹر میں نئے ڈرامے کی ریہرسل کے دوران گفتگو کرتے ہوئے ڈائریکٹر ڈاکٹر اجمل ملک نے کہا کہ میں نے ہمیشہ اچھے اور معیاری ڈراموں کو پروموٹ کیا ہے کیونکہ ہماری کوشش ہوتی ہے کہ ہمارے ڈراموں میں فیملیز خصوصاً خواتین ضرور آئیں۔ہمارے شعبے میں چند لالچی پروڈیوسرز نے برائی کو فروغ دیا ہے جس کی مذمت ہر ذی شعور نے کی ہے ۔اداکارہ شیبا رانی نے کہا کہ لاہور میں ڈرامے کو بہتر بنانے میں فنکاروں اور پروڈیوسرز کے رول کو بھی فراموش نہیں کیا جاسکتا کسی بھی کام کو بہتر بنانے کے لئے سب مل کر کوشش کریں تو اچھائی ممکن ہے ،افتخار راہی نے کہا کہ فحاشی اور بے ہودگی پھیلانے والوں پر تاحیات پابندی لگا دینی چاہیے۔

مزید : کلچر