سائیں شعر بھول گئے، صف میں کون کون کھڑا تھا، یاد نہ رہا

سائیں شعر بھول گئے، صف میں کون کون کھڑا تھا، یاد نہ رہا
سائیں شعر بھول گئے، صف میں کون کون کھڑا تھا، یاد نہ رہا

  

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) وزیر اعلیٰ سندھ سائیں قائم علی شاہ تقاریب میں سونے میں تو شہرت رکھتے ہیں اب اشعار بھولنے کے حوالے سے بھی ان کو یاد رکھا جائے گا۔

کراچی میں پولیس جوانوں کی پاسنگ آؤٹ پریڈ کے دوران سائیں قائم علی شاہ جوش خطابت میں شعر بھول گئے ۔ انہوں نے مشہور زمانہ شعر پڑھنا چاہا اور” ایک ہی صف میں کھڑے ہوگئے“ پڑھنے کے بعدشعر کااگلا حصہ بھول گئے جس پر سٹیج پر بیٹھے لوگوں نے سائیں کو لقمہ دیا اور انہوں نے شعر مکمل کیا۔

شاعر مشرق علامہ اقبال کے ” شکوہ “ کاپورا شعر کچھ یوں ہے

ایک ہی صف میں کھڑے ہوگئے محمود و ایاز

نہ    کوئی   بندہ    رہا   اور    نہ    کوئی    بندہ    نواز

بندہ    و   صاحب    و   مختار   و   غنی ایک ہوئے

تیری سرکار میں پہنچے   تو   سبھی ایک ہوئے

مزید : کراچی