بھارتی فلم انڈسٹری میں قدم رکھا تو کوئی ہاتھ ملانے کے لئے تیار نہ تھا ،ہر کوئی مجھ سے فاصلہ رکھتا تھا :سنی لیون

بھارتی فلم انڈسٹری میں قدم رکھا تو کوئی ہاتھ ملانے کے لئے تیار نہ تھا ،ہر ...
بھارتی فلم انڈسٹری میں قدم رکھا تو کوئی ہاتھ ملانے کے لئے تیار نہ تھا ،ہر کوئی مجھ سے فاصلہ رکھتا تھا :سنی لیون

  

ممبئی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت کی بولڈ اور بے باک اداکارہ سنی لیون پہلے اداکاری کی بجائے ”دوسری فلموں “میں شہرت رکھتی تھیں لیکن سال 2012 میں ریلیز ہونے والی بھارتی فلم”جسم2“ نے سنی لیون کے لئے بطور بے باک اداکارہ کے بھارتی فلم انڈسٹری کے بند دروازے کھول دیئے ۔

جسم2کی ریلیز کے بعد سنی لیون مسلسل 2سال تک بھارتی میڈیا کی زینت بنی رہیں اور ان کے ”کردار“پر بحث ہوتی رہی ۔سنی لیون مسلسل 2سال تک گوگل پر سب سے زیادہ سرچ کی جانے والی سیلیبرٹیز میں شامل رہی ہیں ۔4سال میں تقریبا 10فلموں میں اپنی ”بے باکی کے جوہر دکھانے “والی سنی لیون نے معروف بھارتی نیوز چینل”این ڈی ٹی وی “کے ایک پروگرام”واک آن ٹاک“ میں سینئر صحافی شیکھر گپتا کو انٹرویو میں اپنے بالی ووڈ کے سفر کی کہانی بیان کرتے ہوئے کہا ہے کہ رئیلٹی شو ”بگ باس “ میں حصہ لینے کے دوران ہی انہیں ”جسم2“کی آفر ہوئی لیکن فلمی دنیا سے منسلک ہونے کے بعد میرا ابتدائی تجربہ اچھا نہیں رہا ۔بالی ووڈ کی بڑی بڑی ہستیاں اور سٹار مجھ سے فاصلہ بنا کر رکھتے تھے اور مجھے ملنے سے کتراتے تھے ،اگر میں کسی تقریب میں جاتی تو اپنے آپ کو بڑا عجیب محسوس کرتی تھی ،لوگ مجھے ایسی نظروں سے دیکھتے تھے کہ مجھے ایسا محسوس ہوتا تھا کہ میں کمرے میں پڑی ہوئی کوئی عجیب سی چیز ہوں ،کوئی بھی میرے قریب ،مجھے ہیلو یا ہائےاور پیار کرنے نہیں آتا تھا ۔سنی لیون کا کہنا تھاکہ بالی ووڈ کے آغاز میں میرے پہلے ایوارڈ شو میں انتظامیہ پوچھتی رہی کہ سنی کہ ساتھ کون جائے گا؟مگر کوئی بھی اداکار ہ یا اداکار میرے ساتھ چل کر سٹیج پر جانے کے لئے بھی تیار نہ تھا،میرے لئے وہ عجیب لمحات تھے اور میں محسوس کر سکتی تھی کہ انڈسٹری کے لوگ میرے کتنے خلاف تھے یا وہ مجھ سے ڈرے ہوئے تھے یا پھر اُن کے دماغ میں میرے بارے میں کچھ عجیب و غریب چل رہا تھا ،آخر کا ایک ”شریف آدمی“ نے میرے ساتھ سٹیج پر جانے کی حامی بھری ۔سنی لیون کا کہنا تھا کہ جب میں نے بھارتی فلم انڈسٹری میں قدم رکھا تو میری ہم عصر اداکارائیں سوچتی تھیں کہ یہ ”جہاں سے آئی ہے جلد وہاں پر واپس چلی جائے گی“لیکن اب لوگوں کی میرے بارے میں سوچ بدل گئی ہے اور اَب لوگ مجھ سے ملنے سے بھی نہیں کتراتے۔

کینیڈا میں پیدا ہونے والی بھارتی نژاد سنی لیون کا کہنا تھا کہ اُس کا اصل اور پیدائشی نام ”کرنجیت کور ووہرا “ہے لیکن فلم انڈسٹری کے لئے میرا نام مناسب نہیں تھا ،جب میں 19سال کی تھی تو دنیا بھر کے ریڈیو پروگرامز ،ٹی وی شوز اور میگزین شوٹ کے لئے جانا پڑتا تھا ”مینز میگزین “ نے میرے نئے نام میں میری مدد کی ،جب میں اُن کو انٹرویو دے رہی تھی تو انہوں نے مجھ سے پوچھا کہ آپ اپنا کیا نام رکھنا چاہتی ہیں تو میں نے کہا ’سنی ‘ کیسا رہے گا ؟اس کے ساتھ آپ کچھ بھی لگا دو ۔اس وقت میں نے اس بارے میں ذرا بھی نہیں سوچا تھا،سنی تو میرے بھائی سندیپ کا ”نک نام“ ہے۔

مزید : تفریح