پاکستان کو ایسی معیشت دیں گے کہ آئندہ بیرونی پروگرام کی ضرورت نہ پڑے ،اسد عمر

پاکستان کو ایسی معیشت دیں گے کہ آئندہ بیرونی پروگرام کی ضرورت نہ پڑے ،اسد عمر
پاکستان کو ایسی معیشت دیں گے کہ آئندہ بیرونی پروگرام کی ضرورت نہ پڑے ،اسد عمر

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر نے کہا ہے کہ چین اور سعودی عرب نے مشکل وقت میں ساتھ دیاہے، متحدہ عرب امارات سے بھی جلد رقوم مل جائیں گی ۔

اسلام آباد میں وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کو ایسی معیشت دیں گے کہ آئندہ بیرونی پروگرام کی ضرورت نہ پڑے ، انہوں نے کہا کہ چین کے ساتھ تجارت اورصنعت کے تعاون میں اپریل تک اہم پیشرفت ہو گی ،اسد عمر نے کہا کہ پاکستان بھارت کے ساتھ بھی تجارت چاہتا ہے ،وزیراعظم نے بھارت کی طرف ہاتھ بڑھایالیکن خیرمقدم نہیں کیاگیا ۔

وفاقی وزیر خزانہ نے کہا کہ سی پیک بیلٹ اینڈ روڈ اقدام کا اہم حصہ ہے، سی پیک پاک چین کی دوطرفہ پارٹنرشپ ہے ،سی پیک گلوبل اکانومی کا 21 ویں صدی میں مرکز ہو گا،انہوںنے کہا کہ سی پیک کا پہلا فیز انفراسٹرکچرپر مبنی تھا ،سی پیک انڈسٹری اور ٹریڈ پر مبنی ہے ،سی پیک میں گورنمنٹ پیچھے اور پرائیویٹ سیکٹر آگے ہے ، پرائیویٹ سیکٹر کی شمولیت اتنی نہیں جتنی درکار ہے ۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد