سپریم کورٹ نے نوازشریف کی سزا معطلی کیخلاف نیب کی اپیلیں مسترد کرنے کا تحریری فیصلہ جاری کر دیا

سپریم کورٹ نے نوازشریف کی سزا معطلی کیخلاف نیب کی اپیلیں مسترد کرنے کا ...
سپریم کورٹ نے نوازشریف کی سزا معطلی کیخلاف نیب کی اپیلیں مسترد کرنے کا تحریری فیصلہ جاری کر دیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) سپریم کورٹ نے ایون فیلڈ ریفرنس میں اسلام آباد ہائیکورٹ کی نوازشریف، مریم اور صفدر کی ضمانتوں کے فیصلے کیخلاف نیب کی اپیلیں مسترد کر دی تھیں جس کا آج تحریری فیصلہ جاری کر دیا گیا ہے ۔سپریم کورٹ کے5رکنی بنچ نے نو از شریف کی سزا معطلی کیخلاف نیب کی اپیل خارج کی تھیں۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کا تحریری فیصلہ 5 صفحات پر مشتمل ہے جسے جسٹس آصف سعید کھوسہ نے تحریر کیا ہے ، فیصلے میں اسلام آبادہائیکورٹ کے فیصلے کوبھی تنقید کا نشانہ بنایا گیا ہے۔فیصلہ میں کہا گیاہے کہ ہائیکو رٹ نے ضمانت کافیصلہ لکھتے ہوئے سپریم کورٹ کی گائیڈلائنزمدنظرنہیں رکھیں،اسلام آباد ہائیکورٹ نے ضمانت کا فیصلہ بھی 41 صفحات پر تحریر کیا،سپریم کورٹ قرار دے چکی ہے کہ ضمانت کے فیصلے مختصر لکھے جائیں۔

فیصلے کے مطابق اسلام آبادہائیکورٹ ضمانت کے کیس میں میرٹس کوبھی زیربحث لائی،اسلام آباد ہائیکورٹ نے فیصلے میں کچھ حتمی نتائج بھی اخذ کر لیے ، ہائیکورٹ نے مرکزی درخواستوں کی سماعت میں ہی ضمانت کی درخواست پرفیصلہ دیا،سپریم کورٹ قراردے چکی ہے نیب کیسزمیں ہائیکورٹ غیرمعمولی آئینی دائرہ سماعت استعمال کرسکتی ہے، نوازشریف کیس میں ایسے کوئی غیر معمولی حالات نہیں تھے۔

سپریم کورٹ کی جانب سے جاری کر دہ تحریری فیصلے میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف کی ضمانت اور اسکی منسوخی کیلیے وجوہات بالکل مختلف ہیں، نیب کی اپیل ایسے شخص کیخلاف ہے جوپہلے ہی جیل میں ہے،نیب کی دوسری فریق خاتون ہے،قانون خواتین کوضمانت میں رعایت فراہم کرتا ہے ,ایسے حالات میں نوازشریف کی سز معطلی کیخلاف نیب اپیل خارج کی جاتی ہے۔

مزید : اہم خبریں /قومی