کفایت شعاری کی پالیسی پر سختی سے عمل پیرا ہیں:عثمان بزدار

کفایت شعاری کی پالیسی پر سختی سے عمل پیرا ہیں:عثمان بزدار

  



لاہور(جنرل رپورٹر)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے بچت اور کفایت شعاری کی مثال قائم کرتے ہوئے وزیراعلیٰ آفس کے اخراجات میں نمایاں کمی کی ہے۔کفایت شعاری سے گزشتہ حکومت کے مقابلے میں وزیراعلیٰ آفس کے اخراجات میں نمایاں کم ہوئے ہیں۔ سابق حکومت کے دور میں مالی سال 2016-17 میں انٹرٹینمنٹ اور تحائف کی مد میں 8 کروڑ 62 لاکھ روپے اور مالی سال 2017-18 میں انٹرٹینمنٹ اور تحائف کی مد میں تقریباً 9 کروڑ روپے کے اخراجات کیے گئے۔ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے دور میں مالی سال 2018-19 میں انٹرٹینمنٹ اور تحائف کی مد میں 5 کروڑ 38 لاکھ روپے کے اخراجات کئے گئے جبکہ مالی سال 2019-20 (نومبر تک) انٹرٹینمنٹ اور تحائف کی مد میں 2 کروڑ روپے کے اخراجات ہوئے۔ سابق حکومت کے دور میں مالی سال 2016-17 میں پٹرول کی مد میں 3 کروڑ 3 لاکھ روپے اور مالی سال 2017-18 میں پٹرول کی مد میں 3 کروڑ 50 لاکھ روپے کے اخراجات ہوئے۔ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کے دور میں پٹرول کی مد میں اخراجات میں نمایاں کمی کی گئی۔ مالی سال 2018-19 میں پٹرول کی مد میں 2 کروڑ 19 لاکھ روپے صرف کئے گئے جبکہ مالی سال 2019-20 (دسمبر تک) پٹرول کی مد میں ایک کروڑ 24 لاکھ روپے خرچ ہوئے۔ مالی سال 2016-17 میں فرنیچر کی مد میں 7 لاکھ 41 ہزار روپے اورمالی سال 2017-18 میں 6 لاکھ 41 ہزار روپے کے اخراجات کئے گئے۔مالی سال 2018-19 میں فرنیچر کی مد میں 14 لاکھ 99 ہزار روپے کے اخراجات ہوئے جبکہ مالی سال 2019-20 میں (دسمبر تک) فرنیچر کی مد میں 4 لاکھ 98 ہزار روپے صرف ہوئے۔ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کے وژن کے مطابق حکومت پنجاب بچت اور کفایت شعاری کی پالیسی پر سختی سے عمل پیرا ہے۔ سرکاری خزانے کو قوم کی مقدس امانت سمجھ کر خرچ کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ غیر ضروری اخراجات مفاد عامہ کے منافی ہیں۔ وزیراعلیٰ آفس کے اخراجات میں نمایاں کمی کرکے نئی روایت ڈالی ہے اور سابق حکومت کی شاہ خرچیوں کے غلط کلچر کا خاتمہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب سرکاری خزانہ صرف اور صرف عوام کی فلاح و بہبود پر خرچ کیا جاتا ہے۔ایک بیان میں وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کہا ہے کہ آزاد کشمیر اور بلوچستان میں برفباری اور لینڈ سلائیڈنگ کے باعث جانی و مالی نقصان پر دلی دکھ ہوا ہے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ یہ وقت مشکل میں گھرے بہن بھائیوں کی مدد کرنے کا ہے اور پنجاب حکومت متاثرہ بہن بھائیوں کی مدد کیلئے حاضر ہے لہٰذامشکلات میں گھرے بہن بھائی خود کو تنہا نہ سمجھیں۔ ایک اور بیان میں سردار عثمان بزدار نے کہا ہے کہ مودی سرکار نے شہریت کے کالے قانون کے ذریعے انڈیا کی تقسیم کی بنیاد رکھ دی۔ انہوں نے کہا کہ بھارت میں یہ کیسی نام نہاد جمہوریت ہے جہاں لوگوں کو شہریت سے بلا جواز محروم کیا جا رہا ہے جبکہ پاکستان میں قائد اعظم کے وژن کے مطابق اقلیتوں کو مثالی حقوق حاصل ہیں۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ پاکستان کی اقلیتیں محفوظ اور مطمئن ہیں اور پنجاب میں پہلی مرتبہ سکھوں اوردیگر اقلیتوں کے لئے میرج لاز تشکیل دیئے گئے ہیں۔

سردار عثمان بزدار

مزید : صفحہ اول