تعمیراتی شعبے کو صنعت کا درجہ دینے سے روزگار،کاروبار بڑھے گا:وزیر اعظم

تعمیراتی شعبے کو صنعت کا درجہ دینے سے روزگار،کاروبار بڑھے گا:وزیر اعظم

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک،نیوزایجنسیاں) وزیراعظم عمران خان نے کہاہے کہ تعمیراتی شعبے کا فروغ اولین ترجیح ہے، تعمیراتی شعبے کو صنعت کا درجہ ملنے سے شعبے کو دیگرصنعتوں کی طرح سہولتیں میسر آئیں، صنعت کی بحالی سے روزگار، کاروبار میں اضافہ ہوگا۔مشکل مالی حالات کیوجہ سے عوام کی مشکلات کا بخوبی ادراک ہے، حکومت پہلے مرحلے میں نیا پاکستان ہا وسنگ کیلئے 25ارب مختص کرچکی ہے۔تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت تعمیراتی صنعت کیلئے اقدامات سے متعلق اجلاس ہوا، مشیر خزانہ حفیظ شیخ اور سرکاری حکام نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔وزیراعظم عمران خان کو حکومتی اقدامات پرعملدرآمد کی بریفنگ دی گئی، انڈسٹری کے فروغ، بحالی کیلئے تجاویز وزیراعظم کوپیش کردی گئیں۔وزیراعظم نے تعمیراتی انڈسٹری کی بحالی کیلئے اہم اقدامات کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ صنعت کی بحالی سے روزگار، کاروبار میں اضافہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ سرکاری اداروں کی ملکیت میں ریاستی املاک کی تعمیرات ترجیحات کا حصہ ہے، ریاستی املاک کا کم آمدن افراد کیلئے برؤئے کارلانا پالیسی کا اہم جزو ہے۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم  نے کہا کہ تعمیراتی شعبے کو صنعت قرار دیے جانے کا اصولی فیصلہ ہوچکا ہے، صنعت کا درجہ ملنے سے شعبے کو دیگرصنعتوں کی طرح سہولتیں میسر آئیں گی۔عمران خان کا کہنا تھا کہ خام تعمیراتی مال کی قیمتوں میں غیرحقیقی اضافے پر مسابقتی کمیشن کردار ادا کرے، تعمیراتی شعبے کا فروغ حکومت کی اولین ترجیح ہے، تعمیرات کے شعبے سے 40 سے زیادہ دیگر شعبہ جات وابستہ ہیں، شعبے کے فروغ سے معاشی عمل تیز اور نوکریوں کے مواقع پیدا ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ مشکل مالی حالات کی وجہ سے عوام کی مشکلات کا بخوبی ادراک ہے، ہر ممکن کوشش ہے معاشی عمل تیز اور کاروباری سرگرمیوں میں اضافہ ہو۔وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ تعمیرات کے فروغ میں حکومت ہر ممکنہ سہولت کیلئے پرعزم ہے، حکومت پہلے مرحلے میں نیا پاکستان ہا وسنگ کیلئے 25ارب مختص کرچکی ہے۔

وزیراعظم 

مزید : صفحہ اول


loading...