کراچی، حیدرآباد کی تباہی کی تحقیقات کیلئے کمیشن بنایا جائے: ڈاکٹر سلیم حیدر

  کراچی، حیدرآباد کی تباہی کی تحقیقات کیلئے کمیشن بنایا جائے: ڈاکٹر سلیم حیدر

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے کہا ہے کہ سندھ ہائیکورٹ کی سربراہی میں ایک تحقیقاتی کمیشن بنایا جائے جو اس کا تعین کرے کہ کراچی اور حیدرآباد کو تباہ کرنے اور کھنڈر میں تبدیل کرنے کا ذمہ دار کون ہے۔ پھر اُن عناصر کیخلاف بلاتفریق کارروائی کی جائے جن کی وجہ سے پاکستان کے خوبصورت ترین شہر آج کچرے کا ڈھیر اور مسائل کا گڑھ بنے ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ حکومت ہر چیز کی تحقیق کیلئے کمیشن بناتی ہے لیکن بدقسمتی سے اس اہم مسئلے کیلئے آج تک کوئی کمیشن نہیں بنایا گیا جس کی وجہ خود حکومتوں کی بدنیتی ہے کیونکہ ملک کو سب سے زیادہ ریونیو دینے والا کراچی اور حیدرآباد کو اُجاڑنے اور مسائل کی آماجگاہ بنانے میں وفاقی،صوبائی اور بلدیاتی حکومتیں خود ذمہ دار ہیں۔ انہوں نے کہاکہ 30 سال سے ایم کیوایم کراچی اور حیدرآباد میں براہ راست حکومت کا حصہ رہی ہے اور اب بھی پانچ سال سے کراچی اور حیدرآباد کی میئر شپ ایم کیوایم کے پاس ہے اسی طرح بلدیات سمیت دیگر وزارتیں پیپلزپارٹی کی صوبائی حکومت کے پاس ہے لیکن بدقسمتی سے یہ دونوں جماعتیں لوٹ مار، اقرباء پروری کے تمام ریکارڈ توڑ چکی ہیں جس کی سزا خود ان کے ووٹرز اور عوام کو مل رہی ہے۔ 10سال میں نہ تو پیپلزپارٹی اور نہ ہی ایم کیوایم نے شہر کی ترقی اور خوشحالی کیلئے ایک بھی پروجیکٹ نہیں بنایا۔ کراچی اور حیدرآبا دکے میئر فنڈز کا رونا رو کر اور صوبائی حکومت وفاقی حکومت پر الزام تراشیاں کرکے اپنی نااہلی اور کرپشن پر پردہ ڈال رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اب سندھ کے مہاجر عوام کو ہوش کے ناخن لینا چاہئیں اگر وہ ایک ہی سوراخ سے بار بار ڈسے جانے کا عمل بند نہیں کریں گے تو پھر اسی طرح کی صورتحال اور پیداگیر، بھتہ خور ان پر مسلط رہیں گے۔

مزید : صفحہ آخر