" کیا پی آئی اے کے جہاز کو واپس لانے کے لیے بھی خونی انقلاب چاہیے" سید حسن مرتضیٰ نے وزیراعظم پرسوالات کی بوچھاڑ کردی

" کیا پی آئی اے کے جہاز کو واپس لانے کے لیے بھی خونی انقلاب چاہیے" سید حسن ...

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور پنجاب اسمبلی میں پارٹی کے پارلیمانی لیڈر سید حسن مرتضیٰ نے کہا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان ضدی بچہ ہے جسکی ہر بات "این آر او نہیں دونگا" پر آکر ختم ہوتی ہے، نا اہل نیازی اپنی ناکامیوں کو نظام کے پیچھے نہیں چھپا سکتے، عمران خان اب خونی انقلاب کی باتیں کر رہے ہیں، بتائیں کیا  وہ جمہوریت پر یقین رکھتے ہیں یا خونی انقلاب پر؟۔

تفصیلات کے مطابق سید حسن مرتضیٰ نے سوشل میڈیا پر جاری کئے جانے والے اپنے ویڈیو پیغام میں کہا کہ سر زمینِ بے آئین کو آئین کسی خونی انقلاب کے ذریعے نہیں بلکہ جمہوریت سے ملا تھا، پاکستان کو ایٹمی طاقت بنانے کے لیے خونی انقلاب نہیں لایا گیا تھا ،خان صاحب بتائیں کہ کابینہ میں بیٹھے چوروں اور لُٹیروں کیخلاف کون سا خونی انقلاب چاہیے ؟۔اُنہوں نے کہا کہ کیا پی آئی اے کے جہاز کو واپس لانے کے لیے بھی خونی انقلاب چاہیے ؟نا اہل نیازی اپنی ناکامیوں کو نظام کے پیچھے نہیں چھپا سکتے ، اپوزیشن کو کوئی این آر او نہیں چاہیے لیکن عوام کو مہنگائی، بیروزگاری اور لاقانونیت کی سزا کیوں دی جارہی ہے؟۔سید حسن مرتضیٰ  نے کہا کہ جو وزیراعظم صحافیوں کے سوالات کا سامنا کرنے سے گھبراتا ہو وہ ملک درپیش چلینجنز کا مقابلہ کیسے کرے گا؟۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -