عید الفطر قریب آ تے ہی بازاروں میں گہما گہمی ،قیمتوں میں 40فیصد اضافہ

عید الفطر قریب آ تے ہی بازاروں میں گہما گہمی ،قیمتوں میں 40فیصد اضافہ

                                        لاہور ( اسداقبال ۔ تصاویر ، ذیشان منیر )ماہ رمضان المبارک کا دوسر ا عشرہ اختتام کے قریب آنے اور عید الفطر قریب آتے ہی صو بائی دارالحکو مت کے بازاروں ، شاپنگ سنٹرز ، پلازوں اور مارکیٹوں میں عوامی گہما گہمی میں اضافہ ہونا شروع ہو گیا ہے جبکہ تاجروں نے بھی مہنگائی کے جن کو بو تل سے باہر نکالتے ہوئے گزشتہ سال کی نسبت اشیائے ضروریہ کی قیمتو ں میں 30سے 40فیصد تک اضا فہ کر دیا ہے شہریو ں نے مہنگائی کا ذمہ دار دکانداروں کو جبکہ سٹا ل ہو لڈرز نے اشیاءکی قیمتو ں میں اضافے کی و جہ توانائی کا بحران اور کارخانہ داروں کی جانب سے قیمتو ں میں اضافہ کر نا قرار دیا ہے دوسری طرف عید کی آمد کے باعث تمام اہم بازاروں ، کاروباری مراکز ، چوڑی ، کلاتھ ، شوز ، جیولرز ،جنرل سٹورز مارکیٹس ، شاپنگ سنٹرز اور دیگر مصروف تجارتی مقامات پر ناجائز تجاوزات میں بھی اضافہ ہو گیا ہے دکانداروں نے اپنی دکانوںکے باہر مختلف اشیاءکے بڑے سٹالز قائم کر دیئے ہیں جبکہ جن دکانداروں کا بزنس عید الفطر کی خرید اری سے متعلق نہیں ہے انہوںنے ہزاروں روپے کرائے پر اپنی دکانوں کے فرنٹ حصے موسمی تھڑے بازوں کو فراہم کر دیئے ہیں جس کے باعث تمام اہم بازاروں اور پبلک مقامات پر ٹریفک کا نظام درہم برہم ہو کر رہ گیا ہے اس طرح پیدل چلنے والی خواتین اور شہریوں کو بھی شدید مشکلات و پریشانی کا سامنا کر نا پڑ رہا ہے ۔ ےہاں ےہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ ان مقامات پر خریداری کےلئے آنے والی خواتین ، بچوں اور باحیثیت لوگوں کی گاڑیوں کو پارک کرنے کےلئے بھی کوئی جگہ مقرر نہ ہونے کی وجہ سے بڑی تعداد میں کاریں ، موٹر سائیکل ، سکوٹر اور دیگر ٹرانسپورٹ ان بازاروں میں ہی پارک کی جا رہی ہیں جو کسی بھی وقت بڑے حادثہ ےا خطرہ کا باعث بن سکتی ہے اسی طرح ریڑھی اورچھابڑی فروشوں نے بھی مصروف بازاروں کا رخ کر لیا ہے لیکن کوئی انہیںکنٹرول کرنے والا نہیں نہ ہی ٹریفک پولیس کی جانب سے کوئی قابل ذکر ٹریفک پلان مرتب کیا گیا ہے اسی طرح اہم کاروباری مراکز کی سکیورٹی کےلئے بھی کوئی خاطر خواہ انتظامات نہیں کئے گئے جس سے نا خوشگوار واقعات رونما ہو نے کا اندیشہ ہے لاہور پو لیس کے اعلی حکام کو چاہیے کہ عیدا لفطر کی آ مد کے پیش نظر بازاروں اور تجارتی مراکز میں سیکیو رٹی کے مو ثر انتظامات تر تیب دیں عیدالفطر کے حوالے سے خر یداری کر نے آئے ہو ئے صارفین ماہ نور ، مسز آصف اور علیان نے نمائندہ پاکستان سے گفتگو کر تے ہو ئے کہا کہ میٹھی عید تو آگئی تاہم غریب مہنگائی کے باعث عید کی خو شیو ں سے محروم رہیں گے کیو نکہ کپڑوں اور جو تو ں کی قیمتیں اس قدر بڑھ گئی ہیں کہ جنھیں خرید نا عام شہری کا بس نہیں مائرہ نے کہا کہ عید قر یب آتے ہی اشیاءکی قیمتو ں میں اضافہ ہو گیا ہے جس پر پرائس کنٹرول کمیٹیوں کو حر کت میں آ نا چاہیے مصباح ، مسز عباس ،زینت ، عائشہ ، اور فاطمہ نے کہا کہ مذہبی تہوار آتے ہی دکاندار مصنو عی مہنگائی کو طو ل پر پہنچا کر شہریو ں کو لو ٹنا شروع کر یتے ہیں جن کو پو چھنے والا کو ئی نہیںانھو ں نے کہا کہ حکمران مہنگائی کے خاتمہ کے لیے اقدامات اٹھائیں ۔ رابعہ اور مسز جاوید نے کہا کہ عید قر یب آتے ہی اشیائے ضروریہ کی قیمتو ں میں 50فیصد تک اضا فہ کر دیا ہے

مزید : میٹروپولیٹن 1