زرداری نے 4حلقوں میں انگوٹھوں کی تصدیق کیلئے تحریک انصاف کے مطالبے کی حمایت کر دی

زرداری نے 4حلقوں میں انگوٹھوں کی تصدیق کیلئے تحریک انصاف کے مطالبے کی حمایت ...

                                       لاہو(این این آئی+ مانیٹرنگ ڈیسک) تحریک انصاف نے پاکستان پیپلزپارٹی کو لانگ مارچ میں باضابطہ شرکت کی دعوت دےدی ہے جبکہ سابق صدر آصف علی زر داری نے چار حلقوں کے حوالے سے تحریک انصاف کے موقف کی حمایت کردی ،ذرائع کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی نے سابق صدر اور شریک چیئرمین پاکستان پیپلزپارٹی آصف زرداری کو ٹیلی فون کرکے انہیں پارٹی کی طرف سے لانگ مارچ میں شرکت کی دعوت دی ۔ شاہ محمود قریشی نے کہاکہ پیپلزپارٹی اگر تحریک انصاف کا موقف درست سمجھتی ہے تو ہمارا ساتھ دے اور اس کے کارکنان ہمارے موقف کی تائید کرتے ہوئے 14 اگست کو ہونے والے لانگ مارچ میں بھرپورشرکت کریں۔اس موقع پر سابق صدر آصف زرداری نے تحریک انصاف کے چارحلقوں میں ووٹوں کی تصدیق کرانے کے موقف کی تائید کرتے ہوئے کہاکہ قومی اسمبلی کے چار حلقوں میں ری کاﺅنٹنگ کرانے میں کیا حرج ہے ؟ نواز شریف اس سے کیوں خوفزدہ ہیں ۔ پنجاب میں ہو یا سندھ میں ¾ ری کاﺅنٹنگ ہونی چاہیے۔آصف علی زرداری نے حکومت کی جانب سے لاہور کے چار حلقوں میں دوبارہ گنتی کرانے کے مطالبے کو حکومت کی جانب سے مستقل ٹالنے پر حیرت اور مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر چار حلقوں میں دوبارہ گنتی کا مطالبہ مان لیا جائے تو آسمان نہیں گر پڑے گا۔ اگر مختلف حلقوں میں شکایات ہوں اور دوبارہ گنتی کا مطالبہ کیا جائے تو دوبارہ گنتی ہونی چاہیے چاہے وہ حلقے پنجاب میں ہوں یا سندھ میں۔ آصف علی زرداری کے ترجمان سینیٹر فرحت اللہ بابر کے مطابق سابق صدر نے یہ بات اس مسئلے پر تنازعے کے طول پکڑنے پر کی ہے کہ لاہور کے چار حلقوں میں دوبارہ گنتی کرائی جائے۔ آصف علی زرداری نے اس بات پر حیرانی کا اظہار بھی کیا کہ آخر وزیراعظم اس مطالبے پر اتنے نروس کیوں ہیں۔ چار تو کیا اگر چالیس حلقوں میں بھی دوبارہ گنتی کی ضرورت ہو تو گنتی کرائی جانی چاہیے۔ نواز شریف کو قوم نے ملک کا وزیراعظم منتخب کیا تھا نہ کہ مطلق العنان بادشاہ کہ وہ ملک کے چاروں صوبوں میں دخل اندازی کرتے پھریں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے جمہوریت اور جمہوری عمل کے تسلسل کے لئے انتخابات کے نتائج تسلیم کئے تھے لیکن اب عوام کی مشکلات جو لوڈشیڈنگ اور پانی کی کمی کی وجہ سے دوچند ہوگئی ہیں ان حالات میں عوام کو اکیلا نہیں چھوڑ سکتی۔ صنعتی شعبہ بھی مسلسل لوڈشیڈنگ کی وجہ سے بحران کا شکار ہے۔

مزید : صفحہ اول