عمران خان عام انتخابات کو متنازعہ قرار دے کر جمہوریت کی بساط کو لپیٹنا چاہتے ہیں ،وفاقی وزرائ

عمران خان عام انتخابات کو متنازعہ قرار دے کر جمہوریت کی بساط کو لپیٹنا چاہتے ...

                                                   اسلام آباد(اے این این)وفاقی وزراءنے کہاہے کہ عمران خان عام انتخابات کو متنازعہ قرار دے کرجمہوریت کی بساط کو لپیٹنا چاہتے ہیں،ملک میں انتشار پیداکرکے دشمنوں کی مدد کی جارہی ہے ، چیئرمین تحریک انصاف ہمارا امن و ترقی کا مارچ روک نہیں سکتے، وہ جلد سیاسی تنہائی کا شکار ہو جائیں گے، عمران خان نے قومی اتحاد اور ہم آہنگی کے دن 14 اگست کو عوام میں تقسیم کیلئے چنا ۔۔منگل کوعمران خان کی پریس کانفرنس پرردعمل ظاہرکرتے ہوئے وفاقی وزیراطلاعات ونشریات پرویز رشید نے کہا کہ عمران خان پاکستان کے آئین، عدلیہ اور الیکشن ٹربیونلز کو بھی تسلیم نہیں کرتے دراصل وہ اور ا ن کے مشیر آپریشن ضرب عضب اور آئی ڈی پیز سے توجہ ہٹانا چاہتے ہیں ان کا ہر فیصلہ اور قدم قومی اتحاد کے منافی ہے تاہم عمران خان ہمارا امن و ترقی کا مارچ روک نہیں سکتے ۔  انہوں نے کہا کہ عمران خان نہ ڈینگی کی وبا میں عوام کے ساتھ تھے اور نہ ہی آواران کے زلزلے میں متاثرین کے پاس گئے اس کے برعکس وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف بنوں میں بھی اپنے بھائیوں کی مدد کو گئے اور آئندہ بھی جاتے رہیں گے۔ وزیردفاع خواجہ آصف نے اپنے ردعمل میں کہا کہ عمران خان ہر پریس کانفرنس میں ایک نیا مطالبہ کرتے ہیں وہ جلد سیاسی تنہائی کا شکار ہو جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان تھر اور ڈینگی وبا کے دوران عوام کے ساتھ نہیں تھے اور زلزلے کے بعد بھی آواران نہیں گئے جبکہ وزیراعظم نواز شریف اور شہباز شریف بنوں میں بے گھر بھائیوں کی مدد کیلئے گئے ہیں اور آئندہ بھی جاتے رہیں گے کوئی آئی ڈی پیز کی مدد سے ہمیں نہیں روک سکتا۔ انہوں نے کہاکہ مسلم لیگ ن کی قیادت نے ہر مشکل گھڑی میں پاکستان کے بہن بھائیوں کے ساتھ رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان کے الزامات اقوام متحدہ اور یورپی مبصرین بھی مسترد کرچکے ہیں۔ ان کے ہر دعوے کا جواب ملکی اور بین لاقوامی ادارے دے چکے ہیں۔ عمران خان عدلیہ اور الیکشن کمیشن کو دھمکانا چھوڑ دیں ۔ وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ عام انتخابات کو متنازع قرار دے کر عمران خان جمہوریت کی بساط کو لپیٹنا چاہتے ہیں تاہم حکومت عوام کی حمایت سے بنتی ہے کسی کی خواہش سے نہیں۔ خیبرپختونخوا میں تحریک انصاف کا طرز حکمرانی دیکھا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان خیبرپختونخوا میں اپنے وعدے پورے نہیں کر پارہے اور راہ فرار کی تلاش میں ہیں لیکن عوام تحریک انصاف کو فرار کا موقع نہیں دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان ملک میں انتشار پیداکرکے دشمنوں کی مدد کررہے ہیں۔ وزیر امور کشمیر برجیس طاہر نے کہا کہ عمران خان ضر ب عضب سے قوم کی توجہ ہٹا کر دہشت گردوں کی مدد کررہے ہیں۔ انہوں نے قومی اتحاد اور ہم آہنگی کے دن 14 اگست کو عوام میں تقسیم کیلئے چنا ہے۔ وفاقی حکومت شمالی وزیرستان کے متاثرین کی مدد کرتی رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف گیاری میں شہیدوں کے ساتھ تھے، تھر، آواران اور بنوں بھی گئے۔ عمران خان سونامی کی دھن پر بنی گالہ میں ناچنا چھوڑ دیں۔ خیبرپختونخوا میں اپنی حکومت کی ناکامی پر وہ بوکھلاہٹ کا شکار ہیں اور اپنی جان چھڑانے کیلئے الزام تراشی میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عوام نے حکومت پر اعتماد کیا ہے، عمران خان حقیقت تسلیم کریں۔

مزید : صفحہ اول