حکومت پرویز مشرف اورزرداری حکومت کی پالیسیوں پر چل رہی ہے، سراج الحق

حکومت پرویز مشرف اورزرداری حکومت کی پالیسیوں پر چل رہی ہے، سراج الحق

لاہور (پ ر)امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے کہا ہے کہ وزیر اعظم نواز شریف اپنے وعدوں کو بھول گئے ہیں ٗلوڈشیڈنگ کا خاتمہ ہوا نہ مہنگائی اور بد امنی ختم ہوئی ۔ حکومت پرویز مشرف اورزرداری حکومت کی پالیسیوں پر چل رہی ہے کل بھی امریکہ کی ڈکٹیشن پر فیصلے ہوتے تھے اور آج بھی امریکی ڈکٹیشن پر فیصلے ہو رہے ہیں۔ نواز حکومت بھی سابقہ حکومتوں کا تسلسل ہے ، ہم تو چاہتے ہیں نواز شریف 5سال پورے کریں مگر ان کے اقدامات سے نہیں لگتا کہ یہ اپنے 5سال سال پورے کر سکیں گے۔ رمضان کا پیغام ہے کہ ہم اپنے دلوں کے اندر پائے جانے والے بتوں کو توڑدیں اور صرف ایک ہی رب کی بندگی کریں۔جماعت اسلامی کے مرکزی میڈیا سیل منصورہ سے جاری کردہ پریس ریلیز کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے مسجد رضوان فیڈرل بی ایریا میں جماعت اسلامی کے تحت منعقدہ عوامی دعوتِ افطار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔دعوتِ افطار سے امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن ،امیرجماعت اسلامی ضلع وسطی منعم ظفر،سیکریٹری محمد یوسف اور دیگر نے خطاب کیا۔اس موقع پر ننھے بچوں نے شمالی وزیرستان کے لیے اپنے گللک امیر جماعت کو پیش کیے۔عوامی دعوت افطار کے موقع پر خالد صدیقی نے فلسطین کے حوالے سے ایک قرارداد بھی پیش کی جس میں مطالبہ کیا گیاکہ فلسطینیوں پر مظالم بند کیے جائیں اور صہیونی قبضے سے فلسطینی سر زمین آزاد کرائی جائے ۔سراج الحق نے کہا کہ رمضان المبارک تقوی اور اپنے گناہوں کو اللہ رب العزت سے معاف کرانے کا مہینہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے آئین میں موجود ہے کہ پاکستان کا سرکاری مذہب اسلام ہے لیکن سرکار کی طرف سے اسلامی نظام کے لیے کام کرنے کی کوئی کا وش نظر نہیں آتی ۔آئین کے روسے حکومت کا فرض ہے کہ ایسا نظام قائم کرے کہ عوام کے مسائل حل ہوں لیکن حکومت کی طرف سے ایسا کوئی اقدام نظر نہیں آتا ۔حکومت کی ذمہ داری ہے کہ قرآن کریم کی تعلیم کو لازمی کرے مگر حکومت اپنی ذمہ داری پوری نہیں کر رہی اور ایسے لوگ وزیر بن جاتے ہیں کہ جن کو سورہ اخلاص تک نہیں آتی

مزید : صفحہ آخر