چین کے تعاون سے عوام کو لوڈشیڈنگ کے عذاب سے نجات دلائیں گے،شہباز شریف

چین کے تعاون سے عوام کو لوڈشیڈنگ کے عذاب سے نجات دلائیں گے،شہباز شریف

لاہور(پ ر) وزیراعلی پنجاب محمدشہبازشریف نے کہا ہے کہ پاکستان کو توانائی بحران سے نجات دلانے کے لئے تمام ترممکنہ کوششیں کی جا رہی ہیں ۔ چین کے تعاون سے قوم کو اندھیروں سے باہر نکالیں گے ۔ ہائیڈل اور تھرمل کے علاوہ کوئلے، سولر اور دیگر متبادل ذرائع سے 2017ء تک دس سے بارہ ہزارمیگاواٹ بجلی کے نئے منصوبے لگانے کے لئے منصوبہ بندی کر لی گئی ہے اور تیز رفتاری سے بعض منصوبوں پر عملدرآمد کا آغاز بھی ہو چکا ہے ۔وہ اسلام آباد میں توانائی کے بارے میں وزیراعظم کی قائم کردہ خصوصی کمیٹی کے منعقدہ اجلاس سے خطاب کر رہے تھے ۔ وفاقی وزیرمنصوبہ بندی و ترقیات احسن اقبال ، وفاقی وزیرریلوے خواجہ سعد رفیق، امور خارجہ کے مشیر طارق فاطمی کے علاوہ خزانہ، پانی و بجلی، منصوبہ بندی ، پاکستان ریلوے ، پورٹس اینڈ شپنگ کارپوریشن اور متعلقہ وزارتوں کے سیکریٹریز اور دیگر اعلی حکام نے اجلاس میں شرکت کی ۔وزیراعلی محمد شہبازشریف نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بجلی ہوگی توزراعت و صنعت کا پہیہ چلے گا اور معیشت مضبوط اور مستحکم ہوگی ۔ حکومت توانائی کے بحران کو ہر صورت میں کنٹرول کرے گی اور اس کے لئے بیرونی سرمایہ کاروں کو تمام تر ممکنہ سہولتیں فراہم کی جارہی ہیں۔ محمدشہبازشریف نے کہا کہ چین کی سرمایہ کار کمپنیوں کی طرف سے پاکستان میں بجلی بالخصوص کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کے منصوبوں میں حوصلہ افزاء تعاون اور سرمایہ کاری میں دلچسپی کا اظہار کیا گیاہے اور بعض کمپنیوں کے ساتھ معاہدوں کے بعد عملًا کام شروع ہوچکا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پنجاب میں کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کے منصوبوں کے لئے کوئلے کی سپلائی و ترسیل کا جامع نظام پاکستان ریلوے کے تعاون سے وضع کر لیا گیا ہے ۔ وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعید رفیق نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کوئلے سے بجلی پیدا کرنے کے منصوبوں کے لئے کوئلے کی پورٹ قاسم اور کراچی پورٹ سے ٹرانسپورٹیشن کے لئے پاکستان ریلوے ہر ممکن تعاون کرے گا۔ وفاقی وزیرمنصوبہ بندی احسن اقبال نے کہا کہ 4تا 7اگست پاک چائنہ توانائی کے ماہرین کے ورکنگ گروپ کے منعقد ہونے والے اجلاس کے لئے تمام متعلقہ وزارتیں اپنی قابل عمل تجاویز اور ضروری تیاری کو 26جولائی تک حتمی شکل دے دیں تاکہ بجلی کے جاری اور مجوزہ منصوبوں پر تیز رفتاری سے کام آگے بڑھ سکے ۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ پورٹ قاسم پر کوئلے کی سٹاکنگ اور ترسیل کے لئے تقریبا 16 ملین ٹن گنجائش پیدا کی جائے گی اور پرائیویٹ سیکٹر کی شمولیت سے کول ڈسچارج سسٹم مکمل ہوگا وزیراعلیٰ محمد شہبازشریف سے ڈیرہ غازیخان سے ایم این اے اویس احمد خان لغاری نے ملاقات کی۔ملاقات میں جنوبی پنجاب کی ترقی اورخوشحالی کیلئے پنجاب حکومت کے اقدامات پر تبادلہ خیال ہوا۔وزیراعلیٰ شہباز شریف نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ جنوبی پنجاب میں ترقیاتی منصوبوں کے لئے رواں مالی سال 119ارب روپے مختص کیے گئے ہیں جو کہ صوبہ پنجاب کے کل ترقیاتی بجٹ کا 36فیصد ہے جس سے جنوبی پنجاب میں ترقی اورخوشحالی کے نئے دور کا آغاز ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ ملتان میں میٹروبس پراجیکٹ کے منصوبے کا جلد سنگ بنیاد رکھا جائے گا۔منصوبے کی تکمیل سے علاقے کے عوام کو تیز رفتار ،محفوظ اور با کفایت سفری سہولیات میسر آئیں گی۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم محمد نواز شریف کی قیادت میں پاکستان ترقی اور خوشحالی کا سفر تیز رفتاری سے طے کررہا ہے۔18کروڑ عوام ترقی کی راہ میں رکاوٹ بننے والا لانگ مارچ نہیں چاہتے۔ملک کو افراتفری پھیلانے والے لانگ مارچ کی بجائے ترقی اورخوشحالی کے لانگ مارچ کی ضرورت ہے ۔ایم این اے اویس احمد خان لغاری نے اس موقع پر کہا کہ صوبے کی تیز رفتار ترقی کے لئے وزیراعلی پنجاب کے اقدامات قابل ستائش ہیں۔وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے بٹگرام کے علاقے کوٹ گلہ کے مقام پر مسافر وین کھائی میں گرنے سے قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہارکیا ہے۔وزیراعلیٰ نے حادثے میں جاں بحق ہونے والوں کے سوگوار اہل خانہ سے ہمدردی کا اظہار کیا ہے ۔

مزید : صفحہ اول