صوبے میں لوڈ شیڈنگ کا مسئلہ حل نہ ہوا تو پنجاب کی بجلی بند کردیں گے:پر ویز خٹک

صوبے میں لوڈ شیڈنگ کا مسئلہ حل نہ ہوا تو پنجاب کی بجلی بند کردیں گے:پر ویز خٹک
صوبے میں لوڈ شیڈنگ کا مسئلہ حل نہ ہوا تو پنجاب کی بجلی بند کردیں گے:پر ویز خٹک

  

پشاور(ما نیٹرنگ ڈیسک ) وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک نے دھمکی دی ہے کہ اگر ہمارے صوبے کو اس کا جا ئز حق نہ ملا تو پنجاب کی بجلی بند کردیں گے۔صو بائی دارلحکومت میں بجلی کی غیراعلانیہ بندش کے خلاف احتجاج کے دوران وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا کا کہنا تھا کہ بجلی کی بلا روک ٹوک فراہمی ہمارا حق ہے جو ہمیں نہیں مل رہا ہے ، ہمارا صوبہ اپنی ضرورت سے زیادہ بجلی، گیس اور تیل پیدا کررہا ہے لیکن ہمیں نہ تو بجلی ملتی ہے نہ ہی گیس دی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ خیبر پختونخوا 3500میگا واٹ بجلی پیدا کرتا ہے اور ہماری ضرورت2400 میگا واٹ ہے جس کا مطلب ہے کہ ہم اب بھی اپنی ضرورت سے1100 میگا واٹ بجلی زیادہ پیدا کرتے ہیں،کوٹے کے تحت صوبے کو 2ہزار میگا واٹ ملنی چاہیئے تھی لیکن ہمیں صرف 13سو میگا واٹ مل رہی ہے۔ خیبر پختونخوا 4 روپے فی یونٹ کے حساب سے بجلی پیدا کرکے مرکز کو دے رہا ہے لیکن اس کے عوض ہم مرکز سے 16 سے 18 روپے فی یونٹ بجلی کی خرید رہے ہیں۔پرویزخٹک کا کہنا تھا کہ اگر واپڈا نے اپنا رویہ ٹھیک نہ کیا تو صوبائی حکومت ان کو دی گئی سیکیورٹی واپس لے لے گی،سسٹم کو اپ گریڈ کرنا صوبائی حکومت کا کام نہیں بلکہ یہ ذمہ داری وفاق پر عائد ہوتی ہے۔ اگرایک ہفتے کے اندر اندر 5 گرڈ سٹیشنز کے لئے 3 ارب روپے کی منظوری نہ دی گئی تو نتائج کی ذمہ داری ہم پر نہیں ہوگی۔ اگر پنجاب ہماری گندم بند کرسکتا ہے تو ہم اس کی بجلی بھی بند کرسکتے ہیں۔

مزید : پشاور /اہم خبریں