امراءکے بچے ،بچیوں کے کوکین کے عادی ہونے کا انکشاف

امراءکے بچے ،بچیوں کے کوکین کے عادی ہونے کا انکشاف
امراءکے بچے ،بچیوں کے کوکین کے عادی ہونے کا انکشاف

  

اسلام آباد (ویب ڈیسک) انسداد منشیات ڈویژن نے انکشاف کیا ہے پاکستان میں امیرخاندانوں کے بچے اور بچیاں دنیا کے سب سے مہنگے نشے”کوکین“ کے عادی ہورہے ہیں جبکہ ہیروئن کی سب سے زیادہ مانگ امریکہ میں ہے۔یہ انکشاف سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ میں سیکریٹری انسداد منشیات ڈویژن اکبر ہوتی نے کیا۔ ڈی جی اے این ایف میجر جنرل خاور حیات نے کمیٹی کو بتایا ملک میں منشیات سے متاثرہ افراد کیلئے بحالی مرکز موجود نہیں، رواں سال کے دوران 2.4 ٹن ہیروئن، 16.4 ٹن افیون اور 2 ٹن کیمیکل پکڑا۔ رواں برس کے پہلے چھ ماہ میں 38 ٹن کیمیکل پکڑا جو چین سے آیا تھا، وسائل اور فورس کی کمی کے باعث منشیات کی سمگلنگ کی روک تھام میں دشواریاں پیش آ رہی ہیں۔ کمیٹی کے چئیر مین سینیٹر طلحہ محمود نے سی ڈی اے کو ہدایت کہ وہ اے این ایف کو فوری طور پر زمین الاٹ کرے جبکہ وزارت خارجہ سے بیرون ملک منشیات کی سمگلنگ کے الزام میں قید پاکستانیوں کی تفصیلات طلب کر لیں۔ اجلاس میں وزیر داخلہ کی عدم شرکت پر کمیٹی نے اظہار بر ہمی کیا۔ سینیٹرطاہر حسین مشہدی نے کہا چوہدری نثارکے کمیٹی کے اجلاسوں میں نہ شرکت کرنے پر وزیراعظم کو خط لکھیں گے۔ اے این ایف کی طرف سے کمیٹی کو بتایا گیا کہ دفاتر کیلئے زمین درکار ہے جس پر سی ڈی اے کے ممبر پلاننگ نے بتایا اسلام آباد میں زمین موجود نہیں اسلئے اے این ایف کو زمین نہیں دی جا سکتی جس پر کمیٹی کے چئیرمین طلحہ محمود نے کہا کہ سی ڈی اے میں پلاٹوں کی الاٹمنٹ کا 72 ارب روپے کا سکینڈل موجود ہے ، 66پلاٹوں کی بجائے 3192 پلاٹ الاٹ کئے گئے لیکن سرکاری اداروں کے لئے زمین موجود نہیں، ممبر سی ڈی اے نے کمیٹی کو یقین دہانی کرائی وہ معاملہ کو دوبارہ سی ڈی اے بورڈ کے سامنے رکھیں گے۔ اکبر ہوتی نے بتایا پورٹ قاسم کراچی سے کنٹینرز کی چیکنگ پر وزارت تجارت ناراض ہو جاتی ہے، ایئر پورٹس پر سکینر لگانے کے لئے فنڈز نہیں۔ اے این ایف کے ڈی جی میجر جنرل خاور حیات نے کمیٹی کو بتایاکہ افغانستان میں نیٹو اور ایساف کے آنے سے قبل 67 ہزار ہیکٹر رقبے پر پوست کاشت کی جاتی تھی لیکن اب وہاں 2لاکھ 20 ہزار ہیکٹر رقبے پر پوست کاشت ہو رہی ہے۔ سنیٹر طلحہ محمود نے کہا اس کا مطلب ہے امریکہ پوست کی کاشت کرانے میں ملوث ہے اور افغانستان کی جنگ بھی منشیات کے پیسوں پر لڑی جا رہی ہے۔ سنیٹرطاہر حسین مشہدی نے کہا سی آئی اے منشیات کا پیسہ استعمال کر رہی ہے، اس کے تمام خفیہ آپریشن کو منشیات کی رقم سے فنڈنگ ہو رہی ہے، طالبان بھی منشیات کا پیسہ استعمال کرتے ہیں۔

مزید : اسلام آباد