بدترین لوڈ شیڈنگ ، کم وولٹج سے برقی آلات خراب ہوگئے

بدترین لوڈ شیڈنگ ، کم وولٹج سے برقی آلات خراب ہوگئے
بدترین لوڈ شیڈنگ ، کم وولٹج سے برقی آلات خراب ہوگئے

  

لاہور(ما نیٹر نگ ڈیسک ) ملک کے مختلف حصوں میں بجلی کی لوڈ شیڈنگ نے روزہ داروں کی زندگی اجیرن بنا دی ، بار بار ٹرپنگ کے باعث کئی علاقوں میں لوگوں نے رات جاگ کر گزاری ، بجلی کی بندش کا دورانیہ سولہ سے بیس گھنٹے تک جا پہنچا۔تفصیلات کے مطابق بجلی کی بدترین لوڈ شیڈنگ کے باعث ملک کا ہر شہری دہائی دے رہا ہے، بجلی کی بار بار ٹرپنگ اور کم وولٹیج سے برقی آلات خراب ہونا شروع ہو گئے ہیں۔ صوبا ئی دارلحکومت میں گزشتہ رات ہر 10 منٹ بعد پون گھنٹے کی جبری لوڈ شیڈنگ نے روزہ داروں کو ہلکان کر دیا ہے اور متعدد علاقوں میں شہریوں نے افطار اندھیرے میں کی اور رات جاگ کر گزاری ۔ فیصل آباد میں 18سے 20 گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ نے روزہ داروں کو نڈھال کر دیا۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ لوڈ شیڈنگ کے خاتمے کا دعویٰ کرنے والے کہاں ہیں۔ میپکو ریجن میں 12 سے 14 اور دیہی علاقوں میں 16 سے 20 گھنٹے بجلی کی لوڈ شیڈنگ سے روزہ دار بلبلا اٹھے۔پشاور سمیت گردونواح میں بھی بدترین لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ کوئٹہ کے دیہی علاقوں میں 16 سے 18 گھنٹوں کی لوڈشیڈنگ کے باعث معمولات زندگی بری طرح متاثر ہو رہے ہیں۔

مزید : لاہور /اہم خبریں