مسجد الحرام میں کھانے پینے کی اشیاءلانے پر پابندی

مسجد الحرام میں کھانے پینے کی اشیاءلانے پر پابندی
مسجد الحرام میں کھانے پینے کی اشیاءلانے پر پابندی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

مکہ المکرمہ(نیوزڈیسک) سعودی حکام نے مسجد الحرام میں آنے والوں پر پابندی عائد کردی ہے کہ وہ اپنے ساتھ کھانے کی اشیاءلے کر مسجد میں داخل نہ ہوں کیونکہ خالی بوتلوں، ڈبوں اور بچے ہوئے کھانے کی بڑی مقدار نے مسجد کی صفائی میں مشکلات پیدا کرید ہیں۔ مسجد کے انتظامی امور کیلئے ذمہ دار ایک افسر نے بتایا کہ زائرین افطار کیلئے بڑی مقدار میں کھانے لے کر مسجد میں آتے ہیں حالانکہ انتظامیہ کی طرف سے روزانہ افطار کیلئے 10 لاکھ کھانے کے پیکٹ مفت تقسیم کئے جاتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ اکثر زائرین مسجد میں کھانا کھانے کے بعد خالی ڈبے، بوتلیں، بچا ہوا کھانا، چھلکے اور دیگر اشیاءوہیں چھوڑ دیتے ہیں جس کے باعث مسجد کا صحن ان اشیاءسے بھرا نظر آتا ہے اور عبادت گزاروں کیلئے مسائل پیدا ہوجاتے ہیں۔ افسر نے مسئلے کی شدت واضح کرنے کیلئے بتایا کہ افطار کے بعد 500 افراد بطور سپر وائزر کام کرتے ہوئے صفائی کا عمل مکمل کرواتے ہیں۔ انہوں نے مزید بتایا کہ لوگ اپنا سامان مفت دستیاب لاکرز میں رکھ سکتے ہیں جہاں یہ مکمل محفوظ ہوگا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس